دیوبند

دیوبند،کورونا وائرس کے پھیلنے کے مد نظر ہندو جاگرن منچ نے میلہ منسوخ کئے جانے کا مطالبہ کیا

میلہ کو منسوخ کرکے میلہ کی تاریخوں میں صرف پرساد چڑھائے جانے کے انتظامات کئے جائیں

دیوبند،12؍اپریل (رضوان سلمانی ) ہندو جاگرن منچ نے کورونا وباء کے مسلسل پھیلنے کے مد نظر شری تری پور بالا سندری دیوی مندر پر ہر سال لگنے والے میلے کو منسوخ کئے جانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ میلہ کو منسوخ کرکے میلہ کی تاریخوں پر مندرمیں پرساد چڑھائے جانے کے انتظامات کردئے جائیں ۔تفصیل کے مطابق پیر کے روز دیوبند کے ایس ڈی ایم راکیش کمار سنگھ کو دئے جانے والے ایک میمورنڈم میں کہا گیا ہے کہ کورونا کی مہلک وباء کے ایک مرتبہ پھر بہت زیادہ پھیل جانے سے لوگوں کی جانوں کی حفاظت کرنے کی ذمہ داری حکومت اور انتظامیہ کی ہے اس لئے ہر سال شری تری پور بالا سندری دیوی مندر پر لگنے والے میلہ میں ہونے والی بھیڑ کے مد نظر اس سال میلہ کو منسوخ کئے جانے کا فیصلہ لیا جائے کیونکہ میلہ کے انعقاد سے یہاں ہونے والی لوگوں کی بھیڑ سے ان کی زندگیوں کو خطرہ لاحق ہو سکتا ہے اور کورونا کی مہلک وباء مزید شدت اختیار کر سکتی ہے ۔ میمورنڈم میں کہا گیا ہے کہ کورونا وباء کی وجہ سے تمام حالات کو مد نظر رکھتے ہوئے میلہ کو منسوخ کرکے صرف مندر میں پرساد چڑھائے جانے کے انتظامات کئے جائیں ۔ اس کے علاوہ نوراتر کے پہلے دن سے چودھویں دن تک زیر تعمیر گیٹ کے آس پاس سے رکاوٹوں کو صاف کرنے اور میلہ گیٹ سے مندرتک دھوپ اور گرمی سے بچائو کے انتظامات کئے جانے کا بھی مطالبہ کیا گیا ہے ۔ میمورنڈم دینے والوں میں ٹھاکر سریندر پال سنگھ ایڈووکیٹ ،رودر مشرا ،دیپک سون ،سنیل سسودھیا ،وکرم سنگھ اور تشار شرما وغیرہ موجود رہے ۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close