دیوبند

جامعۃ الشیخ میں مولانا مزمل قاسمی نے دیا بخاری شریف کا آخری درس

دیوبند،28؍مارچ (رضوان سلمانی) جامعۃ الشیخ حسین احمدمدنی میں گزشتہ شب مہتمم و شیخ الحدیث مولانا مزمل علی قاسمی نے طلبہ کو بخاری شریف کا آخری درس دیتے ہوئے انہیں اجازت احادیث سے نوازا اور حضرت امام بخاری کی حیات اور ان کی بیش بہا خدمات پر مفصل انداز میں روشنی ڈالتے ہوئے فضلاء کوامر باالمعروف اور نہی عن المنکرکی روشنی میں زندگی گزارنے کی تلقین کی۔واضح رہے کہ جامعۃ الشیخ دیوبند میں لاک ڈؤان کے بعد انلاک کا عمل شروع ہونے کے ساتھ تقریباً گزشتہ سات ماہ قبل تعلیمی سلسلہ حکومتی اورمحکمہ صحت کی گائیڈ لائن کو مدنظر رکھتے ہوئے شروع کیاگیا،جہاں گزشتہ شب تقریباً 250؍ طلبہ نے بخاری شریف کی آخری حدیث پڑھنے کے ساتھ سند فضیلت حاصل کی۔اس موقع پر مولانا مزمل علی قاسمی نے طلبہ کو اپنے قیمتی پندو نصائح سے نوازتے ہوئے کہاکہ اب آپ کی بڑی ذمہ داری شروع ہوتی ہے، یہاں سے آپ کومعاشرہ میںکھرا سونا ثابت ہونا ہے اور پوری امت کی امیدوں کے مطابق دین اسلام کی تبلیغ و اشاعت کے فرائض انجام دیناہے۔ مولانا نے کہاکہ عالم بنناکمال نہیں بلکہ عالم باعمل بن کر اس علم سے پوری دنیا کو سیراب کرنا اور اس کے مطابق زندگی گزارنا اصل مقصود ہے۔ مولانا مزمل نے طلبہ کو نصیحت کرتے ہوئے سماج کے ہر طبقہ کی آپ سے بڑی امیدیں وابستہ ہے اسلئے آپ کے اندر تواضع وانکساری ہونی چاہئے، بردباری ہونی چاہئے، نماز کی پابندی ، آپ کا رہن سہن آپ کا لباس، آپ کی بول چال سب پر اسلام کا رنگ غالب ہو، یاد رکھیں اگر آپ نے ذرا بھی غفلت برتی تو لوگ آپ کو نام رکھیں گے اور آپ کی وجہ سے علم دین بھی بدنام ہوگا آپ کا یہ مدرسہ بھی جہاں آپ نے اتنا وقت گزاراہے بدنام ہوگا۔اس لیے آپ کو چاہئے کہ آپ کی آنے والی زندگی اتباع سنت اور شریعت کے سانچے میں ڈھلی ہوئی ہونی چاہئے۔مولانا نے کہاکہ ہم نے سخت ترین حالات میں اللہ کے بھروسہ تعلیمی سلسلہ کو جاری کیا تھا آج الحمد اللہ اس میں کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ انہوں نے سماج میں باہمی اخوت ،محبت اور بھائی چارہ کو مضبوط بنانے کے لئے کام کرنے پر بھی زور دیا اور طلبہ سے کہاکہ وہ قرآن و حدیث کے امن و شانتی اوربھائی چارہ کے پیغام کو پوری دنیا تک پہنچائیں۔ بعدازیں مولانا نے فراغت حاصل کرنے والے طلبہ کو اجازت حدیث سے نوازا ۔ ا س دوران مولانا مزمل علی قاسمی نے پوری امت اور اپنے ملک میں امن وامان کے لئے رقت آمیز دعاء کرائی،جس میں طلبہ کے علاوہ کثیر تعداد میں علاقہ کے لوگ بھی شریک رہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close