بین الاقوامی

جودھ پور تشدد پراقوام متحدہ میں آوازاٹھی،حکومت سے امن برقرار رکھنے کی اپیل

جودھپور4مئی(ہندوستان اردو ٹائمز) راجستھان کے جودھ پورمیں ہوئے تشددپراقوام متحدہ میں بھی بحث ہو رہی ہے۔ اقوام متحدہ کے ترجمان نے ہندوستانی حکومت اور ایجنسیوں سے شہر میں امن اور ہم آہنگی کو یقینی بنانے کا مطالبہ کیاہے۔

اس کے علاوہ اقوام متحدہ کے سربراہ انتونیو گوٹیرس کے دفتر نے شہر کی تمام کمیونٹیز سے مل کر کام کرنے کی اپیل کی ہے۔ عید کے موقع پر جودھ پور میں ہنگامہ ہوا۔ اس کے بعد پولیس نے علاقے میں سیکورٹی بڑھا دی تھی۔ اس کے ساتھ ہی انٹرنیٹ بند کرنے جیسے اقدامات بھی کیے گئے۔جب عید سے قبل تشدد کے بارے میں سوالات پوچھے گئے تو سیکرٹری جنرل کے نائب ترجمان نے کہاہے کہ میرے خیال میں بنیادی چیز ہماری امید ہے کہ مختلف کمیونٹیز مل کر کام کریں گی اور حکومت اور سیکورٹی فورسز اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ ہر کوئی امن میں ہے۔

تاکہ آپ تہوار سمیت اپنی سرگرمیاں کر سکیں۔ تشددکے دوران پانچ پولیس اہلکار زخمی بھی ہوئے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق اے ڈی جی (امن و امان) ایچ ایس گھمریا نے بتایاہے کہ آج بھی ضلع میں پولیس کی بھاری نفری تعینات ہے اور کرفیو سختی سے نافذہے۔ انہوں نے کہاہے کہ ضلع میں ہونے والے چھوٹے واقعات پر بھی کڑی نظر رکھی جا رہی ہے۔تشدد سے متعلق معاملات میں اب تک 97 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔

ریاست کے وزیراعلیٰ اشوک گہلوت نے تشدد کو افسوسناک قرار دیاہے۔ انہوں نے افسران کو سخت کارروائی کرنے کی ہدایت دی تھی۔ سی ایم نے کہا تھاہے کہ یہ بدقسمتی کی بات ہے کہ دو گروپوں کے درمیان تصادم نے تشدد کو جنم دیا۔ انتظامیہ کو امن و امان برقرار رکھنے کا حکم دیا گیا ہے۔ انہوں نے الزام لگایا ہے کہ تشدد بھڑکانے میں بھارتیہ جنتا پارٹی کا ہاتھ ہے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button