یوپی

سپریم کورٹ 9 اپریل کو مختار انصاری کی اہلیہ کی درخواست پر سماعت کرے گا

نئی دہلی،07؍ اپریل (آئی این ایس انڈیا) سپریم کورٹ جمعہ کو ایم ایل اے مختار انصاری کی اہلیہ کی درخواست پر سماعت کرے گا جس میں انہوں نے اتر پردیش حکومت سے ریاست میں اپنے شوہر کے سلامتی کو یقینی بنانے اور ان کے خلاف منصفانہ مقدمہ چلانے کی درخواست کی ہے۔ جسٹس اشوک بھوشن اور جسٹس آر سبھاش ریڈی پر مشتمل بنچ 9 اپریل کو افشاں انصاری کی درخواست پر سماعت کرے گا۔ درخواست میں الزام لگایا گیا ہے کہ اتر پردیش میں انصاری کے جان کا خطرہ ہے۔انصاری پر اترپردیش میں متعدد مجرمانہ واقعات انجام دینے کا الزام ہے۔

سپریم کورٹ میں دائر درخواست میں الزام لگایا گیا ہے کہ اترپردیش میں انصاری کے جان کو خطرہ ہے اور اگر عدالت ان کی حفاظت کے لئے اقدامات کرنے کی ہدایت نہیں دیتی ہے تو پھر انصاری کے مارے جانے کا امکان ہے۔ درخواست کے مطابق سیاسی دشمنوں کے ذریعہ انصاری پر حملہ کرنے کی متعدد کوششیں کی گئیں ہیں جو حکمران سیاسی جماعتوں سے وابستہ ہیں۔ پیر کو انصاری کی اہلیہ افشاں انصاری کی جانب سے دائر درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ ان کے شوہر کو ایک جیل سے دوسری جیل اور جیل سے عدالت لے جانے کے دوران ویڈیو گرافی کی جانی چاہئے ، اور یہ معاملہ سی آر پی ایف جیسی مرکزی فورس کی نگرانی میں کیا جانا چاہئے۔ 26 مارچ کو عدالت نے پنجاب حکومت کو انصاری کو اتر پردیش پولیس کے حوالے کرنے کا حکم دیاتھا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close