یوپی

امیر شریعت دیار ہند میں سرمایہ ملت کے نگہبان تھے: مولانا محـمد علی نعیـم رازی ! مولانا مرحوم کی وفات ملت کا عظیم خسارہ : فیروز خان ندوی

لکھنؤ (پریس ریلیز) آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے جنرل سیکرٹری امیر شریعت مولانا سید محمد ولی رحمانی کے سانحہ ارتحال پر اظہار افسوس کرتے ہوئے معروف سماجی کارکن مولانا محمد علی نعیم رازی نے پریس کو جاری ایک بیان میں کہا کہ مصائب و آلام سے پر ان حالات میں مولانا مرحوم کی شکل میں ملت کے ایک عظیم پاسبان اور بےباک قائد کا داغ مفارقت دے جانا ایسا خسارہ ہے جس کی تلافی ناممکن سی نظر آتی ہے
مولانا محمد علی نعیم رازی نے کہا کہ مولانا مرحوم کی نصف صدی سے زائد عرصہ پر محیط ملی و تعلیمی خدمات اس باز کی غماز ہے کہ مولانا مرحوم ایک عظیم مفکر اور دوررس نگاہوں کے حامل راہنما تھے
خادم ملت مولانا رازی نے کہا کہ آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے پلیٹ فارم سے مولانا رحمانی ملت اسلامیہ کا موقف ہمیشہ جس بےباک انداز میں پیش کیا کرتے تھے وہ مولانا کی ذات کا طرۂ امتیاز تھا
مولانا محمد علی نعیم رازی نے کہا کہ حقیقت ہے کہ مولانا مرحوم دیار ہند میں سرمایہ ملت کے حقیقی نگہبان تھے اور قوم کے ایک مخلص اور بے لوث راہنما تھے

آل انڈیا علماء ایسوسی ایشن کے صدر مولانا فیروز خان ندوی نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہا کہ مرحوم کا اس طرح اچانک رخصت ہونا ملت اسلامیہ کے لئے سانحہ ہے جسکی تلافی مستقبل قریب میں ناممکن معلوم ہوتی ہے
مولانا فیروز خان ندوی نے کہا کہ مولانا مرحوم نام کے بھی ولی تھے اور کردار کے بھی ولی تھے اور اس تاریک دور میں امید اور حوصلے کی ایک کرن تھے
مولانا فیروز خان ندوی نے کہا کہ مولانا مرحوم اپنی ذات میں ایک انجمن اور کاروان تھے انکی خدمات کو ملت اسلامیہ کی تاریخ میں ایک روشن باب کے طور پر یاد رکھا جائے گا
مولانا فیروز خان نے کہا کہ مولانا ولی رحمانی ایک عظیم قائد،بے باک راہنما ، نایاب مصلح اور مفکر دوراں تھے اور اپنی حیات کو ملت کے لئے وقف کئے ہوئے تھے
مولانا رحمانی کے سانحہ ارتحال پر مفتی عبد اللہ انجم مظاہری ، شاعر خالد لکھنوی، شبیر احمد ثقافی وغیرہ نے تعزیت کی

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close