یوپی

یوگی حکومت کا فیصلہ: ڈی سی پی کو غنڈہ ایکٹ کے تحت کاروائی کا اختیار – گنے کی قیمت کابھی اعلان،مسلسل تیسرے سال قیمت میں کوئی اضافہ نہیں

لکھنؤ، 15 فروری (آئی این ایس انڈیا) کمشنریٹ میں پولیس کے ڈپٹی کمشنر یعنی ڈی سی پی کو غنڈہ ایکٹ کے تحت کاروائی کرنے کا حق مل گیا ہے۔کابینہ کے ذریعہ سرکولیشن میں یوپی غنڈا کنٹرول (ترمیمی) بل 2021 کو منظور کیا گیا ہے۔ بتادیں کہ اس وقت لکھنؤ اور نوئیڈا میں کمشنریٹی سسٹم نافذ ہے۔ اس بل میں انسانی اسمگلنگ، منی لانڈرنگ، گئوہتیا، بندھوامزدوری اور جانوروں کی اسمگلنگ پر سختی سے لگام لگانے کا ذکرہے۔کابینہ کے ذریعہ سرکولیشن میںگنگا ایکسپریس وے کے لئے اراضی کے حصول سے متعلق تجویز بھی منظور کی گئی ہے۔ اس کے تحت یو پی ڈی اے زمین کے حصول کے لئے ہڈکو سے 2900 کروڑ کا قرض لے گا۔ 594 کلومیٹر لمبے ایکسپریس وے کی تخمینہ لاگت 36410 کروڑ روپے ہے۔ ایودھیا میں ہوائی اڈے کے لئے سی آر پی ایف اراضی لینے کی تجویز کو بھی منظور کرلیا گیا۔ اس کے بدلے سی آر پی ایف کو کہیں اور زمین دی جائے گی۔کابینہ میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ میرٹھ میں چترکوٹ کے سوموتی اماسویا اور نوچندی میلے کے اخراجات حکومت اٹھائے گی۔ پہلے ضلعی انتظامیہ ان میلوں میں خرچ کرتی تھی۔ حکومت نے ان دونوں میلوں کو ریاستی میلہ قرار دیا ہے۔
بتادیں کہ کیبنٹ بائی سرکولیشن میں سیشن 2020-21 کی گنے کی قیمت کا بھی اعلان کیا گیاہے۔ گنے کی قیمت میں مسلسل تیسرے سال اضافہ نہیں ہوا ہے۔ عام نسل کے لئے 315، اگیتی کے لئے 325 روپے فی کوئنٹل رکھا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ایس ڈی آر ایف کے لئے لکھنؤ میں غیر رہائشی عمارتوں کی تعمیر کا بھی فیصلہ لیا گیا ہے۔ ساتھ ہی پریاگراج میں قائم کئے جارہے 1320 میگا واٹ میگا تھرمل پاور منصوبے کی نظر ثانی شدہ لاگت کو بھی اجلاس میں منظور کیا گیا ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close