ہندوستان

اتر پردیش میں بسوں کو لے کر تنازعہ پر مایاوتی نے کانگریس کو دی نصیحت

نئی دہلی ،20 ؍مئی ( آئی این ایس انڈیا ) کورونا وائرس کی وجہ سے مسلسل کوچ کر رہے مزدوروں کے لئے بسوں کا بندوبست کرنے کے معاملے پر یوگی سرکار اور کانگریس مد مقابل ہیں۔ دونوں کے درمیان مسلسل الزام تراشیوں کا دور کل جاری رہا۔ اسی درمیان اتر پردیش کی سابق وزیر اعلی اور بی ایس پی سپرمو مایاوتی نے بی جے پی اور کانگریس پر گھنونی سیاست کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کانگریس کو چار تجاویز دی ہیں۔مایاوتی نے اپنی تجاویز میں کہا کہ ورکرز کو بسوں سے ہی گھر بھیجنے میں مدد کرنے پر مصر رہنے کے بجائے ان کو ٹکٹ لے کر ٹرینوں سے گھر بھیجنے میں ان کی مدد کرنی چاہیے۔گزشتہ کئی دنوں سے مہاجر مزدوروںکو گھر بھیجنے کے نام پر خاص طور پر بی جے پی اور کانگریس کی طرف سے جس طرح سے گھنونی سیاست کی جا رہی ہے یہ انتہائی بدقسمتی ہے۔کہیں ایسا تو نہیں یہ پارٹیاں باہمی ملی بھگت سے ایک دوسرے پر الزام تراشیوں کرکے اصل مسئلے سے توجہ ہٹا رہی ہیں؟اگر ایسا نہیں ہے تو بی ایس پی کا کہنا ہے کہ کانگریس کو مزدوروں کو بسوں سے بھیجنے میں مدد کرنے کے بجائے ان کو ٹرینوں سے گھر بھیجنے میں ان کی مدد کرنی چاہیے تو یہ زیادہ مناسب ہوگا۔بی ایس پی نے کانگریس پارٹی کو یہ بھی مشورہ دیاہے کہ اگر کانگریس کو مزدوروںکی بسوں کے ذریعہ ہی مدد کرنی ہے تو پھر اپنی تمام بسیں کانگریس کے زیر حکومت والی ریاستوں میں مزدوروں کی مدد میں لگا دینی چاہیے یہ بہتر ہو گا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close