ہندوستان

وزارت صحت کی ہدایات:ایک دو کیس آنے پر پورے آفس کو بند کرنے کی ضرورت نہیں

نئی دہلی، 19 مئی (آئی این ایس انڈیا) ملک میں مسلسل بڑھتے کورونا وائرس کے معاملات کی درمیان مرکزی وزارت صحت کی جانب سے مسلسل حکمت عملی میں تبدیلی کی جا رہی ہے۔اس دوران دفتروں اور کام کے مقامات کے لئے مرکزی حکومت کی جانب سے تازہ ہدایات جاری کی گئی ہیں۔اس کے مطابق، اگر کسی آفس میں ایک یا دو کورونا وائرس کے کیس آتے ہیں تو پورے آفس کو بند کرنے کی ضرورت نہیں ہے،اگرچہ آفس کو مکمل طور پر غیرماثر کرنا ضروری ہوگا۔منگل کو جاری کی گئی ہدایات میں بتایا گیا ہے کہ اگر کسی آفس میں اچانک زیادہ کیس آتے ہیں، تو اس آفس کو 48 گھنٹے کے لئے بند کیا جا سکتا ہے۔اس دوران ہر کسی کو گھر سے کام کرنا ہو گا اور آفس کو مکمل طور پرغیرماثر کیا جائے گا۔

ہدایات میں کہا گیا ہے کہ اچانک ایک آفس میں بہت کیس آنے سے وہ جگہ کلسٹر بن سکتی ہے، کیونکہ دفتر بند رہتے ہیں ایسے میں یہ خطرناک ثابت ہو سکتا ہے،اگر آفس کے کسی عملے کو بخارجیسا محسوس ہوتا ہے تو اس کو گھر پر رہنا چاہئے اور ڈاکٹر سے رابطہ کرنا چاہیے۔وہیں اگر آفس کا کوئی بھی ملازم کسی کٹینمیٹ زون میں رہتا ہے، تو اسے ورک فرام ہوم کی اجازت دینی چاہئے۔اس کے علاوہ تمام دفتروں کو مجازی میٹنگ پر زور دینا چاہئے۔ہدایات کے مطابق، آفس علاقہ چھوٹا ہے، لوگ ارد گرد بیٹھتے ہیں اور کیفیٹیریا میں آنا جانا ہوتا ہے، ایسے میں یہاں تیزی سے وائرس پھیل سکتا ہے، لہذا سینٹائز سمیت دیگر تمام قوانین پر عمل کرنا ضروری ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close