ہندوستان

جمعیۃ علماء ہند کے نائب صدر حضرت مفتی خیر الاسلام آسام کا انتقال : جمعیۃ علماء ہند کی طرف سے اظہار رنج و غم و تعزیت مسنونہ پیش

نئی دہلی3جولائی(آئی این ایس انڈیا) جمعیۃ علماء ہند کے نائب صدر مفتی خیر الاسلام (ناگائوں آسام ) طویل علالت کے بعد84 سال کی عمر میں رحلت فرما گئے ۔ نماز جنازہ ڈوہ گائوں آسام میں جمعرات کو بعد نماز عصر ان کے صاحبزادے مفتی فخرالدین صاحب کی امامت میں ادا کی گئی جس میںمجمع کثیر شریک تھا ۔مولانا مرحوم جلیل القدر عالم ، متقی اورزاہدو غنی النفس انسان تھے ، وہ آسام میں پھیلے ہوئے سینکروں مدارس و جامعات کے سرپرست اور مرجع کثیر الخلائق تھے۔آسام کی معروف علمی ود ینی شخصیت اور امیر شریعت اول حضرت شیخ احمد علی باسکندی نوراللہ مرقدہ کے محبوب نظر رہے ،

شیخ باسکندی کے انتقال کے بعد سال ۲۰۰۰ء میں منصب امارت سے سرفراز ہوئے اور تاحیات اس پر فائز رہے ۔وہ سن ۱۹۶۳ء میں دارالعلوم دیوبند سے فارغ ہوئے ، فراغت کے بعد دارالحدیث جے نگر آسام میں در س و تدریس کا آغاز کیا ، دوسال بعد ۶۵ء میں دارالعلوم فرمائی بھیٹی آسام میں درس و تدریس سے وابستہ ہوئے جہاں تاحیات شیخ الحدیث کے فرائض انجام دیتے رہے۔اس کے علاوہ مرحوم جمعیۃ علماء آسام کے نائب صدر اور دینی تعلیمی بورڈ کے بھی صدرتھے ۔ ۲۸؍ا کتوبر ۲۰۱۷ء کو دفتر جمعیۃ علماء ہند نئی دہلی میں منعقد اجلاس مجلس منتظمہ میں مولانا مرحوم کو جمعیۃ علماء ہند کا کل ہند نائب صدر منتخب کیا گیا ۔ وہ تادم واپسیں اس عہدے پر فائز رہے ۔جمعیۃ علماء ہند کے صدر مولانا قاری سید محمد عثمان منصورپوری اور جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی نے مولانائے ممدوح کے وصال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے ۔

انھوں نے کہا کہ مولانا کے انتقال سے ایک بڑا خلا پیدا ہواہے ۔وہ جمعیۃ علماء کی تحریکات اور سرگرمیوں سے نصف صدی سے زائد عرصے تک ایک مرد مجاہد کی طرح وابستہ رہے اور جسم ناتواں اور مسلک درویشی کے باوجود باطل قوتوں کا ڈٹ کر مقابلہ کیا ۔ان کی جلیل القدر خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے دعاء ہے کہ اللہ تعالی ان کو ان تمام نعمتوں سے نوازے جو اولیاء ومقربین کے لیے مخصوص ہے اور ان کے مراتب میں ابداً و دائماً ترقی فرماتار ہے ۔حضرت مرحوم و مغفور کے جملہ پسماندگان بالخصوص صاحبزادہ عزیز مفتی فخرالدین صاحب و دیگر سے تعزیت مسنونہ و دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے دعاء ہے کہ اللہ تعالی ان کو صبر جمیل اور حضرت موصوف کے نقش قدم پر چلنے کی توفیق عنایت فرمائے ۔سبھی جماعتی احباب و متعلقین سے اپیل ہے کہ مرحوم کے لیے خصوصی دعائے مغفرت و ایصال ثواب کا اہتمام کریں۔ دریں اثنا مولانا مرحوم کے جنازے میں جمعیۃ علماء آسام کے معاون سکریٹری مولانا عبدالقادر بھی شریک ہوئے ۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close