قومی

ہلاکت خیزسیلاب: اب تک آسام میں62،میگھالیہ میں 13 ہلاک

دیس پور ، 19جون (هندوستان اردو ٹائمز) آسام میں سیلاب کی وجہ سے کہرام مچ گیا ہے۔ آسام اسٹیٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (اے ایس ڈی ایم اے) نے ایک ریلیز جاری کرتے ہوئے بتایا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں سیلاب اور لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے مزید 8 افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ اس کے ساتھ ہی ریاست میں اب تک مرنے والوں کی کل تعداد 62 ہو گئی ہے۔آٹھ افراد میں سے 2 لوگ کریم گنج ضلع میں اور ایک شخص ہیلاکنڈی ضلع میں مٹی کے تودے گرنے سے زندہ دب گئے اور موقع پر ہی دم توڑ گئے۔اس کے ساتھ ہی سیلابی پانی میں ڈوبنے سے 6 افراد جان کی بازی ہار گئے۔

ریاست کے 32 اضلاع کے 4,291 گاؤں میں 30 لاکھ سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔ایک رپورٹ کے مطابق ہفتہ کو آسام کے وزیر اعلیٰ ہمانتا بسوا سرما نے کئی ریلیف کیمپوں کا دورہ کیا۔ اس سے پہلے وزیر اعظم نریندر مودی نے سی ایم سرما کو فون کیا اور ریاست میں سیلاب کی صورتحال کے بارے میں دریافت کیا۔ پی ایم مودی نے وزیر اعلیٰ کو مرکز کی طرف سے ریاست کو ہر ممکن مدد کا یقین دلایا۔سی ایم نے خود ٹویٹ کرکے یہ اطلاع دی۔ انہوں نے بتایا کہ پی ایم مودی نے صبح 6 بجے سیلاب کی صورتحال کے بارے میں دریافت کیا اور قدرتی آفت کی وجہ سے لوگوں کو درپیش مسائل پر اپنی تشویش کا اظہار کیا۔ دریں اثنا، سی ایم سرما نے ریاست کے کامروپ ضلع کے رنگیا علاقے کا دورہ کیا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ متعلقہ حکام کو حساس علاقوں میں مقیم لوگوں کو فوری طور پر ریلیف کیمپوں سے نکالنے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔سی ایم نے یہ بھی کہا کہ فوج ہمیشہ مدد کے لیے تیار ہے، جب کہ این ڈی آر ایف اور ایس ڈی آر ایف کے اہلکار مسلسل متاثرہ لوگوں کو محفوظ مقام پر لے جا رہے ہیں۔ریاست کے روجائی ضلع میں سیلاب سے متاثرہ 113 افراد کو لے جانے والی ملکی ساختہ کشتی الٹ گئی جس سے ایک خاتون اور ایک چار سالہ بچہ ہلاک ہو گیا۔

گوہاٹی کے کئی علاقوں بشمول کاچھر، کریم گنج، ہیلاکنڈی، گولپارہ، جنوبی سلمارا، دیما ہاساو اور کامروپ اضلاع کے کچھ حصوں میں لینڈ سلائیڈنگ کی اطلاع ملی ہے۔آسام کے علاوہ میگھالیہ اور تریپورہ میں بھی لوگوں کو سیلاب کی تباہ کاریوں کا سامنا ہے۔ مرکزی حکومت میگھالیہ میں سیلاب کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے ایک ٹیم بھیجنے جا رہی ہے۔جمعہ کو ریاست میں بارش اور سیلاب کی وجہ سے 13 لوگوں کی موت ہو گئی تھی۔ اس کے بعد مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے ریاست کے وزیر اعلیٰ کونراڈ سنگما سے بات کی اور سیلاب کی تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کیا۔ امیت شاہ نے چیف منسٹر سنگما کو ہر ممکن مدد کا یقین دلایا ہے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button