کھیل

آئی پی ایل کو مہاراشٹر حکومت سےملی ہری جھنڈی،بغیر کسی رکاوٹ کے ہوگا میچوں کاانعقاد،نہیں کھیلنے کےباوجود شریش ایئرکوملیں گے 7 کروڑ

ممبئی،05؍ اپریل (آئی این ایس انڈیا) مہاراشٹر میں کورونا وائرس کے ریکارڈ کیسز کے باوجود ممبئی میں آئی پی ایل میچوں کے انعقاد کو گرین سگنل مل گیا۔ مہاراشٹر حکومت نے اعلان کیا ہے کہ آئی پی ایل کے میچز بغیر کسی مداخلت کے ممبئی میں ہوں گے۔ تاہم مہاراشٹرا حکومت نے واضح کیا ہے کہ میچ کے دوران شائقین کو گراؤنڈ میں جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔مہاراشٹرا حکومت کے وزیر نواب ملک نے آئی پی ایل میچوں کے انعقاد سے متعلق صورتحال کو واضح کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی پی ایل ایونٹ کی منظوری دے دی گئی ہے۔ لیکن میچز کا انعقاد سخت ہدایات کے ساتھ ہوں گے۔ شائقین کو اسٹیڈیم میں جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔ کھلاڑیوں اور باقی عملے کو بایو بلبل میں آئیسولیٹ رہنا ہوگا ۔بی سی سی آئی نے کھلاڑیوں کے لئے ویکسین کا مطالبہ بھی کیا۔ نواب ملک نے کہا کہ بی سی سی آئی تمام کھلاڑی کو ویکسین دینا چاہتا تھالیکن آئی سی ایم آر کے ہدایات کی وجہ سے ایسا نہیں ہوسکا۔ فی الحال ہم 45 سال سے کم عمر کے لوگوں کو ویکسین نہیں لگا سکتے ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ کچھ دنوں سے مہاراشٹر میں ہر روز کورونا وائرس کے ریکارڈ کیسز درج ہورہے ہیں۔ ریاست میں دوبارہ لاک ڈاؤن کے ساتھ ممبئی میں ہونے والے میچز پر سوالیہ نشان تھا۔ قیاس آرائیاں کی جارہی تھیں کہ ممبئی کے بجائے حیدرآباد میں میچ ہوسکتے ہیں۔تاہم بی سی سی آئی نے پہلے ہی یہ واضح کردیا تھا کہ ممبئی میں ہونے والے میچوں میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی۔ آئی پی ایل کے میچز 10 اپریل سے 24 اپریل تک ممبئی میں ہوں گے۔ آئی پی ایل کا 14 واں سیزن 9 اپریل سے شروع ہوگا۔

آئی پی ایل 2021میں نہیں کھیلنے کے باوجود شریش ایئرکوملیں گے 7 کروڑ

انڈین پریمیر لیگ کے 14 ویں سیزن میں دہلی کیپٹل کی ٹیم نئے کپتان کے ساتھ میدان میں اتر ے گی ،انگلینڈ کے خلاف پہلے ون ڈے میں چوٹ کی وجہ سے شریش ائیر آئی پی ایل کے 14 ویں سیزن سے باہر ہوگئے ہیں۔ تاہم شریس ائیر کو چودھویں سیزن سے باہر ہونے کے باوجود مالی نقصان برداشت نہیں کرنا ہوگا۔ دہلی کیپٹل ائیر کو اس سیزن کی مکمل فیس ادا کرے گی ۔دہلی کیپٹل کے ساتھ شریس ائیر کا سالانہ معاہدہ 7 کروڑ روپئے کا ہے۔ آئی پی ایل کے قواعد کے مطابق دہلی کیپٹل شریش ایئر کو ان کی پوری تنخواہ دے گی ۔ 8 اپریل کو شریش ائیر کے کندھے کی سرجری ہونی ہے۔بی سی سی آئی کی انشورنس پالیسی کے تحت شیریش ائیر کو پوری تنخواہ ملے گی۔ 2011 میں بی سی سی آئی نے یہ قانون نافذ کیا تھا کہ اگر بورڈ کے معاہدے کا کوئی بھی کھلاڑی چوٹ کی وجہ سے آئی پی ایل سے باہر ہو جاتا ہے ، تو اس کو آئی پی ایل ٹیم کو پوری تنخواہ دی جائے گی۔چونکہ شیریش ائیر ٹیم انڈیا کی طرف سے کھیلتے ہوئے زخمی ہوئے ہیں ، اس لئے انہیں بی سی سی آئی کے قانون کا فائدہ ملے گا۔ بی سی سی آئی کا یہ قاعدہ ان کھلاڑیوں پر نافذنہیں ہوتا ہے جن کے پاس بورڈ کا معاہدہ نہیں ہے۔واضح رہے کہ شریس ائیر کی کپتانی میں دہلی کیپٹل نے آخری سیزن میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ دہلی کیپٹل سال 2020 میں پہلی بار آئی پی ایل کے فائنل میں جگہ بنانے میں کامیاب رہی۔ ائیر نے گذشتہ سیزن میں 519 رنز بنائے تھے۔ اس کے علاوہ ایئر نے اب تک آئی پی ایل کے 79 میچوں میں 2200 رنز بناچکے ہیں۔ ائیر کی جگہ دہلی کیپٹل نے رشبھ پنت کو اپنا کپتان مقرر کیا ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close