مضامین و مقالات

"کوویڈ کے بڑھتے معاملات کے بیچ مودی پھر کریں گے وزرائے اعلیٰ سے تبادلہ خیال

محمد عباس دھالیوال،
مالیر کوٹلہ ،پنجاب.
رابطہ. 9855259650
Abbasdhaliwal72@gmail.com

"کوویڈ کے بڑھتے معاملات کے بیچ مودی پھر کریں گے وزرائے اعلیٰ سے تبادلہ خیال ”
ملک میں کورونا وائرس کے متاثرین کی صورتحال روز بہ روز سنگین ہوتی جارہی ہے اسی بیچ گزشتہ روز کورونا متاثرین کے سب سے زیادہ 11458 نئے معاملے سامنے آئے ہیں، جس سے متاثرین کی تعداد تین لاکھ سے تجاوز کرکے 3.09 لاکھ پر پہنچ گئی ہے۔ اس طرح امریکہ برازیل اور روس کے چوتھے پائیدان پر ہم براجمان ہو چکے ہیں. یعنی ہندوستان انفیکشن کے معاملے میں دنیا میں سب سے زیادہ متاثر ہونے والے ممالک کی فہرست میں چوتھے مقام پر پہنچ گیا ہے۔
صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزیرت کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 11458 نئے معاملوں کے ساتھ متاثرین کی تعداد بڑھ کر 308993 ہوگئی۔ اس دوران 386 لوگوں کی موت ہوئی ہے جس سے ملک میں کل مہلوکین کی تعداد 8884 تک پہنچ چکی ہے۔ جبکہ ملک میں اس وقت کورونا کے 145779 سرگرم معاملے ہیں اس کے ساتھ یہاں تسلی بخش بات یہ ہے کہ وبا سے صحت مند ہونے والوں کی تعداد سرگرم معاملوں کے مقابلے 8551 زیادہ یعنی 154330 ہے۔
مہاراشٹر اس وبا سے ملک میں سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے۔ ریاست میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 3493 نئے معاملے درج کئے گئے ہیں اور 127 لوگوں کی موت ہوئی ہے جس کے ساتھ ہی ریاست میں اس سے متاثر ہونے والوں کی کل تعداد بڑھ کر 101141 اور اس مہلک وائرس سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 3717 ہوگئی ہے۔ اس دوران ریاست میں 1718 لوگ بیماری سے صحت مند ہوئے ہیں جس سے صحت مند ہونے والوں کی کل تعداد 47796 ہوگئی ہے.

دیش میں کورونا وائرس کے بڑھتے معاملوں کے درمیان وزیر اعظم نریندر مودی ایک بار پھر سے آئندہ ہفتہ منگل اور بدھ کے روز ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے وزرائے اعلی سے کورونا وائرس سے نمٹنے کے اقدامات کو لیکر تبادلہ خیال کریں گے۔
اس ضمن میں مودی دوگروپوں میں ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ کے ساتھ سہ پہر تین بجے میٹنگ کریں گے۔ منگل کو21 اور بدھ کے روز 15 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے وزرائے اعلیٰ سے گفت و شنید کریں گے۔
یہ اطلاع پی ایم او نے ایک ٹویٹ ذریعے دی.
اس سے پہلے بھی وزیراعظم مودی 20 ، 2 ، 11 اور 27 اپریل اور 11 مارچ کو کورونا کی وبا پھیلنے کے بعد سے پانچ بار وزرائے اعلی کے ساتھ میٹنگیں کر چکے ہیں۔
یہاں قابل ذکر ہے کہ مکمل لاک ڈاؤن کا چوتھا مرحلہ 17 مئی کو ختم ہونے کے ساتھ ملک بھر میں پابندیوں کو ہٹانے کیلئے ’ان لاک ون ‘ کا عمل شروع کیا گیا تھا۔ تب سے ملک میں کورونا وائرس کے معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔

دوسری طرف ہماچل پردیس کانگریس کے صدر کلدیپ سنگھ راٹھور نے حکمران جماعت پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ ملک گرتی معیشت بڑھتی بے روزگاری اور مہنگائی سے پریشان ہے. جبکہ بی جے پی اس نازک وقت میں بھی ورچوئل ریلیاں کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہتر ہوتا کی ورچوئل ریلیوں میں پیسہ خرچ کرنے کے بجائے کورونا وبا سے بچاو پر خرچ کرتی۔ انھوں نے مذید کہا کہ آج ملک میں جس طرح کورونا متاثر لوگوں کی تعداد میں اضافہ ہورہا ہے وہ سب ان کے ناکامیوں کو ظاہر کرتی ہے،ملک اس وبا کے معاملے میں دنیا میں چوتھے مقام پر پرپہنچ گیا ہے جو بہت ہی تشویشناک ہے۔

ادھر پنجاب کے وزیر اعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ نے ریاست میں بار، اتوار اور گزیٹیڈ چھٹیوں والے دنوں کے دوران لاک ڈاؤن رکھنے کا اعلان کیا ہے. اس کے ساتھ ہی وزیر اعلیٰ پنجاب نے کوویڈ 19 کو سماجی پھیلا( کمیونٹی سپریڈ) سے روکنے کے لیے جہاں تک ضروری محسوس ہوا سخت فیصلے لینے کی اپنی حکومت کی یقین دہانی کو دہراتے ہوئے پابندیوں کے ساتھ تفصیلی ہدایات کو منظوری دی ہے جن کے تحت اب انٹر ضلع آنے جانے پر پابندی ہوگی صرف ای- پاس والوں ہی اجازت ملے گی. اس کے علاوہ شادی کی تقریبات کے لیے ای پاس ضروری ہوگا اور یہ صرف پچاس افراد کے لیے ہی جاری ہوگا. اس کے ساتھ ہی انھوں نے کہا کہ صوبے میں حالات کنٹرول میں ہیں اور سرکار مذید کسی بھی قسم کا رِسک نہیں اٹھانا چاہتی جس سے کہ وبا خطرناک صورتحال اختیار کر جائے.

محمد عباس دھالیوال،
مالیر کوٹلہ ،پنجاب.
رابطہ. 9855259650
Abbasdhaliwal72@gmail.com

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close