کھیل

چوتھا ٹیسٹ بارش کی نذر ہوجانے کی وجہ سے ٹیم انڈیا اور کپتان وراٹ کوہلی کو ہوئے یہ تین بڑے نقصانات

جنوری ۷ ۔ ۲۰۱۹

ہندوستان نے بارش کی وجہ سے چوتھا ٹیسٹ میچ ڈرا ہونے کے ساتھ ہی آسٹریلیا میں پہلی مرتبہ ٹیسٹ سیریز جیت کر ایک نئی تاریخ رقم کردی ۔ ہندوستان نے چار میچوں کی سیریز دو ایک سے اپنے نام کی ۔یہ پہلا موقع ہے جب ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا میں سیریز جیتی ہے۔ یہی نہیں یہ پہلی ایشیائی ٹیم بھی ہے ، جس نے آسٹریلیا میں سیریز جیتی ہے۔

اعداد و شمار پر نظر ڈالیں ، تو پتہ چلتا ہے کہ ایشیائی ٹیم کو یہ جیت 71 سال ، 31 سیریز ، 98 ٹیسٹ کے بعد ملی ہے۔ اس دوران 272 کھلاڑی کھیلے اور 29 کپتان تبدیل ہوئے۔ اس اعتبار سے یہ جیت بڑی نہیں بلکہ بہت بڑی ہے۔ تاہم سڈنی ٹیسٹ بارش کی وجہ سے ڈرا ہوجانے کی وجہ سے مزہ تھوڑا ضرور کرکراہوگیا ۔ آکاش چوپڑا بھی نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ میں وراٹ کوہلی کی دہاڑ مس کروں گا۔ بہر حال سڈنی ٹیسٹ میچ بارش کی نذر ہوجانے کی وجہ سے ٹیم انڈیا اور کپتان وراٹ کوہلی کو تین نقصانات ہوئے 

پہلا نقصان

ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا میں پہلی مرتبہ سیریز دو ایک سے جیتی ہے۔ یہ ویسے کسی بھی ایشیائی ٹیم کی سب سے بڑی جیت ہے ، لیکن اگر بارش کی وجہ سے خلل نہیں پڑتا تو یہ جیت تین ایک سے بھی ہوسکتی تھی ۔ ظاہر ہے کہ یہ جیت زیادہ بڑی ہوتی ، لیکن بارش نے بڑی جیت حاصل کرنے کا موقع ٹیم انڈیا سے چھین لیا ۔ اس بات کو لے کر وراٹ کوہلی بھی کافی مایوس ہوں گے 

دوسرا نقصان

ہندوستان کی جانب سے کپتان کے طور پر سب سے زیادہ ٹیسٹ جیتنے کا ریکارڈ ایم ایس دھونی کے نام ہے ، دھونی نے 60 ٹیسٹ میں سے 27 جیتے ہیں۔ کوہلی دوسرے نمبر پر ہیں ۔ انہوں نے 46 ٹیسٹ میچوں میں سے 26 جیت حاصل کی ہے۔ ایسے میں اگر ٹیم انڈیا سڈنی ٹیسٹ جیت جاتی ، تو کوہلی دھونی کی برابری کرتے ہوئے پہلے نمبر پر آجاتے ۔ اب انہیں دھونی کی برابری کرنے کیلئے 8 مہینوں کا طویل انتظار کرنا پڑے گا ، کیونکہ اس سیریز کے بعد ٹیم انڈیا ورلڈ کپ کے بعد ہی کوئی ٹیسٹ سیریز کھیلے گی۔

تیسرا نقصان

ٹیم انڈیا کو اس بات کا ہمیشہ افسوس رہے گا کہ آسٹریلیا کو فالو آن دے کر بھی جیت حاصل نہیں کرسکی ۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ 21 ویں صدی میں یہ دوسرا موقع تھا جب آسٹریلیا فالوآن کھیلنے کیلئے مجبور ہوئی ۔ یہ بڑا نقصان اس لئے بھی ہے کیونکہ یہ بات تاریخ کے صفحات میں درج ہوتے ہوتے رہ گئی کہ ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا کو اس کی ہی سرزمین پر فالوآن دینے کے بعد شاندار جیت درج کی تھی ۔ ٹیم انڈیا گزشتہ 30 سالوں میں پہلی ٹیم ہے ، جو آسٹریلیا کو ان کی سرزمین پر فالوآن دے پائی ۔ آخری مرتبہ انگلینڈ نے انہیں 1988 میں فالوآن کھلایا تھا۔


وسرا نقصان


Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close