پٹنہ

کرونا وائرس سے بچنے کے لئے احتیاطی تدابیر اختیار کرنا ضروری !

نزلہ زکام سے متاثر افراد کو عوامی جگہوں پر جانے سے بچناچاہئے : مولانا انیس الرحمن قاسمی
پٹنہ ۔ 19مارچ 2020 (پریس ریلیز)
آل انڈیا ملی کونسل کے قومی نائب صدر مولانا انیس الرحمن قاسمی چیرمین ابوالکلام ریسرچ فاؤنڈیشن نے ایک اخباری بیان میں کہا ہے کہ اس وقت کورونا وائرس کی وبانے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ہے، اسلام نے بیماریوں کے متعلق عمومی طور پر جو ہدایات دی ہیں، وہ اس نوپید بیماری کے سلسلہ میں بھی ہماری رہنمائی کرتی ہیں اور وہ یہ ہے کہ ہمیں مریضوں سے ہمدردی ہونی چاہیے، ان کے علاج میں معاون بننا چاہیے، اس خطرناک بیماری کا علاج دریافت کرنے کی کوشش کرنی چاہیے؛ کیوں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے ارشاد سے علاج کی ترغیب معلوم ہوتی ہے اور یہ بات واضح ہوتی ہے کہ ہر بیماری کا علاج موجود ہے۔

مولانا قاسمی نے فرمایاکہ علاج ہی کا ایک حصہ پرہیز اوراحتیاطی تدابیرہے،اس پر عمل کرنا چاہیے،رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے بھی وبائی امراض میں خصوصی احتیاط کا حکم فرمایا ہے، اگر کوئی شخص اس بیماری میں مبتلا ہو جائے تو سماج کی اور بالخصوص اس کے متعلقین کی ذمہ داری ہے کہ وہ مریض کے علاج کی بھر پور کوشش کریں اور خود مریض کا فریضہ ہے کہ وہ ایسی باتوں سے بچے، جس سے دوسرا شخص متأثر ہو۔

مولانا نے فرمایاکہ احتیاطی تدابیر میں صفائی ستھرائی کا اہتمام کرنا ہے،اس کے لیے ضروری ہے کہ ہر شخص اپنے ہاتھوں کو اچھی طرح دھوئیں، عام لوگوں سے میل جول سے پرہیز کیا جائے، جس شخص کو نزلہ اور زکام ہو،وہ عوامی جگہوں پر جانے سے پرہیز کرے۔

مولانا قاسمی نے مزید کہاکہ حکومت بہارنے بھی اس مہلک وبائی مرض سے بچنے کے لیے ریاستی سطح پراحتیاطی احکامات جاری کئے ہیں اور ریاست بھر میں سرکاری و غیر سرکاری اسکول، کالج، یونیورسٹی، مدرسے، اکیڈمی، کوچینگ سینٹر سمیت وہ جگہیں جہاں لوگوں کا اجتماع ہوتا ہو،اسے31 مارچ تک بند کرنے کا حکم جاری کردیا ہے۔ہمیں حکومت بہار کی مدد کرنی چاہیے اوراپنے گھروں اورآس پاس کی بھی صفائی کا خاص خیال رکھنا چاہیے۔

نیزمولانا قاسمی نے کہاکہ انسانی زندگی مسرتوں اورمصیبتوں سے دوچار ہوتی رہتی ہے،کرونا وائرس بھی ایک عالمی آفت اورمصیبت ہے،اس موقع سے ہمیں اللہ رب العزت پر توکل،سنت کی پابندی،ذکرواستغفار،صدقہ ودعا کابھی خاص اہتمام کرنا چاہیے۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close