پٹنہ

بہار میں بدترطبی صورت حال وزیراعلیٰ ، نائب وزرائے اعلیٰ ، این ڈی اے کے ایم پی اورایم ایل اے کس کام کے ہیں؟ تیجسوی یادو

پٹنہ 25اپریل(ہندوستان اردو ٹائمز) بہارکے اسپتال بیڈوں اور آکسیجن کی قلت سے دوچار ہے۔ مریض اپنی جانیں گنوا رہے ہیں۔ اس بارے میں بہار میں سیاست بھی تیز ہے۔ قائد حزب اختلاف تیجسوی یادو نے بستروں اور آکسیجن کے معاملے پر سی ایم ، نائب وزیر اعلیٰ اوربہارکے مرکزی وزرا پر طنز کیا ہے۔ انہوں نے یہ بھی سوال اٹھایا ہے کہ یہ لوگ بہارکے لیے 500 بستروں پر مشتمل ایک ہسپتال کا آغاز نہیں کرسکتے ہیں۔

تیجسوی یادو نے ایک اخبار کی کٹنگ شیئر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ یہ خبر بہار کے این ڈی اے کے 48 ممبران پارلیمنٹ ، بی جے پی،جے ڈی یو کی مرکزی اور ریاستی حکومت کی نا اہلیت ، منفی ، طنز اور ناکامیوں کی دستاویزہے۔ انہوں نے کہاہے کہ میں کتنے دن تک ہاتھ جوڑ کر اپیل کر رہا ہوں کہ پانچ سو بستروں پر مشتمل ای ایس آئی سی سے لیس اس اسپتال کا آغاز کریں ، لیکن بے شرم حکومت مرنے کے باوجود بھی یہ کام نہیں کرے گی۔ تیجسوی یادونے مزید لکھا ہے کہ بہار کے سی ایم ، دو نائب وزیر اعلیٰ ، مرکزی وزراء اور کوئی بھی رکن پارلیمنٹ اس اسپتال کو جلد سے جلد شروع کرنے کے قابل نہیں ہے۔ کیا بہار اور مرکزی حکومت مل کر یہاں کچھ ڈاکٹروں اور طبی کارکنوں کی تقرری نہیں کرسکتی ہے تاکہ مریضوں کو لوٹ کر مرنا نہ پڑے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close