بہار

نکاح عبادت ہے اسے آسان بنائیے : مفتی رضوان قاسمی  

بیرول  2 /  اگست ( شمیم احمد رحمانی ) اس وقت آپ حضرات کے سامنے مجھے کوئی لمبا چوڑا وعظ بیان نہیں کرنا ہے بلکہ اس مجلس کی مناسبت سے جو ضروری باتیں تھیں وہ ہمارے مخلص کرم فرما حضرت مولانا مفتی مجاہد الاسلام صاحب قاسمی استاد مدرسہ رحمانیہ سوپول نے آپ حضرات سے گوش گزار فرما دیا میں یہاں موجود مقامی و علاقائی سرکردہ شخصیات سے نکاح اور شادی بیاہ کے تعلق سے مسلمان معاشرے میں پھیل رہی غیر اسلامی رسم و رواج کے بارے میں صرف اتنا کہنا چاہتا ہوں کہ کس طرح غیر اسلامی رسم و رواج پر قابو پایا جاسکے کیونکہ مذہب اسلام میں نکاح کرنا عبادت ہے مذہب اسلام نے نکاح کو جتنا آسان بنایا ہے کسی دوسرے مذہب میں اس کا تصور بھی نہیں ہے آج مسلم معاشرے میں نکاح کے موقع پر غیر اسلامی رسم و رواج اور فضول خرچی کو اس قدر داخل کر دیا گیا ہے کہ مالی اعتبار سے کمزور  مسلم گھرانے کی بچیوں کی شادی میں تاخیر ، والدین کی پریشانیاں اور ذلت و رسوائی ہمارے سماج پر بدنما داغ ہے جس کو مٹانے کی ذمہ داری کسی اور کی نہیں بلکہ صرف اور صرف مسلمان قوم کی ہے مذکورہ باتیں یہاں پرانا تھانہ چوک سوپول بازار سے متصل حضرت الحاج مولانا حافظ محمد عرفان سعیدی صاحب کے تعمیر کردہ دیدہ زیب خوبصورت فنکشن ہال میں محلہ زراعت مدرسہ رحمانیہ روڈ کے رہنے والے ہر دل عزیز ، سماجی کاموں میں فعال جناب ماسٹر الحافظ عبدالقدوس محمودی ابن جناب محمد فاروق انصاری صاحب کا نکاح محلہ شیخوپورہ تھانہ چوک کے رہنے والے محمد مختار احمد انصاری کی صاحبزادی فرحانہ پروین سے پڑھانے سے قبل صدر مرکزی جمیعت علماء سیمانچل جید عالم دین حضرت مولانا مفتی محمد رضوان عالم قاسمی استاذ مدرسہ رحمانیہ افضلہ سوپول بیرول دربھنگہ ( بانی ومتولی مسجد عائشہ رضی اللہ عنہا بیرول ریلوے اسٹیشن ) نے کہی ،

اس موقع پر جید عالم دین حضرت مولانا مفتی محمد رضوان عالم قاسمی نے نو عروش جوڑے سمیت طرفین کے اہل خانہ کو بطور خاص مبارکباد دی مولانا محمد اسحاق صاحب قاسمی استاد مدرسہ رحمانیہ سوپول ، امام مرکز والی جامع مسجد محلہ شیخوپورہ کے امام مولانا جاوید احمد قاسمی ، المعہد الاسلامی و معہد زلیخا للبنات شیخوپورہ سوپول کے مہتمم حضرت الحاج قاری محمد آفتاب صاحب ، قاضی نکاح خواں مولوی محمد شکیل رحمانی ، جناب ماسٹر محمد عبداللہ صاحب ، حاجی محمد نوح عالم صاحب ، سابق نائب مکھیا ڈاکٹر بدو بابو ، ماسٹر محمد برکت اللہ ندوی ، تاجر ڈائیفروٹ دہلی محمد نعمت اللہ مینٹھا ، سابق سرپنچ عبدالصمد صاحب ،  سوپول پنچایت کے مکھیا محمد کاشف اجالا ، جناب عبدالسلام صاحب ، ماسٹر محمد ناصر صاحب ، ماسٹر مختار احمد ، ماسٹر شکیل احمد ، حافظ محمد ارشد رحمانی ، ماسٹر سومن سنگھ ، ماسٹر درگیش کمار گپتا ، ماسٹر پروشتم ٹھاکر ، ماسٹر اندو شیکھر پانڈے ، ماسٹر شمس اعظم ، ماسٹر گلاب ، ماسٹر شمس عالم ہاشمی ، وارڈ کمشنر حافظ محمد حنظلہ ، محمد معین انصاری منحر ، محمد شمیم انصاری سوپول ، ماسٹر منت اللہ ندوی مہینام ، محمد آزاد ، عامل کامل مولانا محمد انس رحمانی ، حافظ محمد ذاکر ڈمری سمیت بڑی تعداد میں مقامی و بیرونی سرکردہ شخصیات موجود تھے

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button