دیوبند

موٹر سائیکل سوار سابق پردھان کی بے قابو کار کی ٹکر سے موت

دیوبند، 11؍ مئی (رضوان سلمانی) دیوبند ۔بڑگاؤں روڈ پرواقع موضع لبکری کے قریب کھجوری کی پلیا پرتیز رفتار کار کی ٹکر سے موٹر سائیکل سوار سابق پردھان کی موت ہو گئی۔ پولیس نے کار ڈرائیور کو حراست میں لے کر سابق پردھان کی لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا۔ جبکہ لواحقین کی شکایت پر ملزم کار ڈرائیور کے خلاف غفلت اور تیز رفتاری کے باعث موٹر سائیکل سوار کی موت کا مقدمہ درج کر لیا گیا۔

تھانہ بڑگاؤں علاقہ کے گاؤں سہجی کے سابق سربراہ روشن سنگھ (50) بدھ کو اپنی موٹر سائیکل پر سوار ہوکر کسی کام کے لیے دیوبند آ رہے تھے۔ جب وہ کھجوری گاؤں کی پلیا کے قریب پہنچا تو سامنے سے آئی بے قابو تیز رفتار کار کی زد میں آکر شدید زخمی ہوگیا ، اس سے پہلے کہ اسے کوئی طبی امداد ملتی وہ موقع پر ہی دم توڑ گیا۔ کار سے ٹکرانے سے موٹر سائیکل کو بھی بھاری نقصان ہوا۔

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچی اور کار ڈرائیور کو حراست میں لے کر متوفی سابق سربراہ روشن سنگھ کی لاش کو قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا۔ پولیس نے بھائیلہ گاؤں ک باشندہ کار ڈرائیور کرن کو حراست میں لے لیا۔ کوتوالی انچارج پربھاکر کینتورا نے بتایا کہ متوفی کے خاندان کی تحریر پر بھائیلہ گاؤں کے رہنے والے کار ڈرائیور کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button