ممبئی

ممبئی: جعلی ویکسی نیشن کیمپ معاملے میں 4 افراد گرفتار ، ابتدائی تفتیش کے بعد پولیس نے ایف آئی آر درج کی

ممبئی ،18؍ جون (ہندوستان اردو ٹائمز) ممبئی کے کاندیولی میں واقع ہیرانندانی ہیریٹیج ہاؤسنگ سوسائٹی میں جعلی ویکسی نیشن کیمپ معاملے میں چار افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔کاندیولی پولیس نے ابتدائی تفتیش کے بعد ایف آئی آر درج کرنے کے بعد ان افراد کو گرفتار کرلیاہے۔ 30 مئی کو کاندیولی میں ہیرانندانی ہاؤسنگ سوسائٹی میں ایک کیمپ کا انعقاد کیا گیا۔ بعدازاں لوگوں نے مختلف اسپتالوں سے سرٹیفکیٹ آنے پر شکوک و شبہات کا اظہار کیا تھا۔ تب سے پولیس اس معاملے کی تحقیقات کر رہی ہے اور اب چار افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔کاندیولی مغربی علاقوں میں ہیرانندانی ہیریٹیج ہاؤسنگ سوسائٹی میں نجی کیمپ لگا کر 390 افراد نے کورونا کا ٹیکہ لگوایا تھا ، لیکن 10 دن بعد انہیں مختلف اسپتالوں سے سرٹیفکیٹ ملی ۔

سوسائٹی کے مطابق ہر ٹیکے کے لئے 1460 روپئے ادا کیے۔ معاشرے کو شک ہے کہ ان کے ساتھ دھوکہ ہوا ہے۔ لہٰذا پولیس میں شکایت درج کروائی گئی تھی۔در اصل ہیرانندانی ہیرٹیج ہائوسنگ کی فلاح و بہبود ایسوسی ایشن سوسائٹی نے اپنی شکایت میں کہا تھا کہ رہائشی کمپلیکس کے ذریعہ 30 مئی کو ایک ویکسی نیشن کیمپ لگایا گیا تھا ، لیکن بعد میں یہ پتہ چلا کہ جن لوگوں نے کورونا پورٹل پر اندراج کرایا ہے ان کا کوئی ریکارڈ دستیاب نہیں ہے۔ . اور انہیں مختلف اسپتالوں کے نام پر سرٹیفکیٹ ملے ہیں۔شکایت میں کہا گیا ہے کہ اگر یہ ویکسین جعلی ثابت ہوتا ہے تو پھر جن لوگوں کو ٹیکہ لگایا گیا ہے اس سے نمٹنے کے لئے انہیں طبی ایمرجنسی کا سامنا کرنا پڑے گا۔لہٰذا تمام واقعات کی تحقیقات کروانے کی اشد ضرورت ہے تاکہ ایسی جعلی کاروائیاں دوسری جگہوں پر دہرائی نہ جائیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close