حیدرآباد

مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی پیشین گوئی : کہا، بھاجپا کا دور آئندہ 30 سے 40 سال تک رہے گا

حیدرآباد؍نئی دہلی،3جولائی (ہندوستان اردو ٹائمز) بی جے پی کے سینئر لیڈر اور مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے حیدرآباد میں پارٹی کی قومی مجلس عاملہ میٹینگ کے دوران کہا کہ اگلے 30 سے 40 سال تک بی جے پی کا دور جاری رہے گا اور اس دوران ہندوستان ’وشو گرو‘ بھی بن جائے گا۔امت شاہ نے کہا کہ خاندان پرستی، ذات پرستی اور ’خوشامد‘ اس ملک کی سیاست کے لیے ایک بہت بڑی لعنت ہے، جو ملک کے مصائب کا باعث ہیں،

واضح ہو کہ ’خوشامدانہ سیاست‘ کا الزام کانگریس پر ہمیشہ سے لگایا جاتا ہے ، جو اقلیتوں بالخصوص مسلمانوں کے حقوق کی بات کرتی ہے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا کہ بی جے پی تلنگانہ اور مغربی بنگال جیسی ریاستوں میں خاندانی راج ختم کرے گی اور آندھرا پردیش، تمل ناڈو اور اڈیشہ سمیت دیگر ریاستوں میں اقتدار میں آئے گی۔ بی جے پی 2014 سے مرکز میں برسراقتدار ہے، لیکن ان ریاستوں میں اقتدار سے باہر ہے۔

امت شاہ نے سپریم کورٹ کے حال ہی میں سنائے گئے اس فیصلے کو تاریخی قرار دیا ہے جس میں آنجہانی رکن پارلیمنٹ احسان جعفری کی اہلیہ ذکیہ جعفری کی عرضی کو خارج کیا گیا تھا۔ عرضی میں گجرات میں 2002 کے فسادات کے سلسلے میں اس وقت کے وزیر اعلیٰ نریندر مودی سمیت 64 لوگوں کو خصوصی تفتیشی ٹیم (ایس آئی ٹی) کی طرف سے دی گئی کلین چٹ کو چیلنج کیا گیا تھا۔

امت شاہ نے کہا کہ مودی نے فسادات میں اپنے مبینہ کردار پر ایس آئی ٹی تحقیقات کا سامنا کیا اور آئین میں اپنا اعتماد برقرار رکھا۔امت شاہ نے کہا کہ بھگوان شیو کی طرح مودی نے ان پر پھینکے گئے تمام زہروں کو ہضم کر لیا۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن غیر مطمئن ہے اور حکومت جو بھی اچھا کرتی ہے ، وہ اس کی مخالفت کرتی رہتی ہے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button