مدھیہ پردیش

کمل ناتھ نے ممتا بنرجی کو’ملکی لیڈر‘قرار دیا ، کہا،ترنمول سربراہ کامقابلہ ای ڈی،سی بی آئی اوربی جے پی سے تھا

اندور5مئی(ہندوستان اردو ٹائمز) ممتا بنرجی کو’ملکی لیڈر‘ قرار دیتے ہوئے کانگریس کے سینئر رہنما کمل ناتھ نے کہاہے کہ انہوں نے اسمبلی انتخابات میں غیرمعمولی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے تمام مخالفین کوشکست دی ہے۔تاہم 2024 کے لوک سبھا انتخابات میں وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف اپوزیشن کی حمایت کے امکان پر ، کمل ناتھ نے کہاہے کہ متحدہ ترقی پسند اتحاد (یو پی اے) وقت آنے پر اپنے انتخابی چہرے پرفیصلہ کرے گا۔کمل ناتھ نے یہاں نامہ نگاروں کوبتایاہے کہ ممتابنرجی آج ہمارے ملک کی قائدہیں۔وہ مسلسل تیسری بار مغربی بنگال کی وزیراعلیٰ بن گئیں۔ وہ اسمبلی انتخابات میں سخت لڑائی کے بعد اس مرحلے پر پہنچیں۔

کانگریس کے سینئر رہنما نے کہا ہے کہ ممتابنرجی کومرکزی حکومت ، مودی اور ان کے وزراء کے ساتھ ہی سی بی آئی ، انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) اور انکم ٹیکس محکمہ سے مقابلہ کرنا تھا۔ اس کے باوجود انہوں نے ان سب کو لات مار دیا ہے۔یہ پوچھے جانے پر کہ کیا بنرجی کو 2024 کے لوک سبھا انتخابات میں مودی کے خلاف اپوزیشن کے چہرے کے طور پر پیش کیاجاسکتا ہے ، کمل ناتھ نے براہ راست جواب سے گریز کرتے ہوئے کہاہے کہ ہمیں ابھی اس بات کا پتہ نہیں ہے۔ اس کافیصلہ یو پی اے کرے گا۔مغربی بنگال میں انتخابی نتائج کے بعدکیے جانے والے سیاسی تشدد کے خلاف بی جے پی کے احتجاج کی طرف اشارہ کرتے ہوئے ، انہوں نے کہا ہے کہ اب وہ (بی جے پی رہنما) یہ بتانے کی کوشش کر رہے ہیں کہ بنگال میں تشدد ہو رہا ہے۔ تشدد کاطریقہ یہ بہت غلط ہے۔ میں نے بھی ممتابنرجی سے فون پر گفتگو کے دوران بات کی کہ وہ ہر ایک کو تشدد سے دور رہنے کے لیے کہیں۔مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اعلیٰ کمل ناتھ نے کہاہے کہ انہوں نے بھی ایک بات چیت کے دوران بنرجی کو اس ریاست میں آنے کی دعوت دی ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close