اہم خبریں

لوگ چاہتے ہیں کہ عوامی مفاد کے مسائل پارلیمنٹ میں اٹھائے جائیں لیکن اپوزیشن بھاگ رہا ہے: انوراگ ٹھاکر

نئی دہلی ،28؍جولائی (ہندوستان اردو ٹائمز) مرکزی وزیر انوراگ ٹھاکر نے پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس میں مسلسل ہنگامہ آرائی پر اپوزیشن جماعتوں کو گھیر ا ہے۔ بدھ کو پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں ہنگامہ ہوا، جس پر انوراگ ٹھاکر نے کہا کہ عوام پارلیمنٹ کے اجلاس کا انتظار کرتے ہیں تاکہ ان کے مسائل پارلیمنٹ میں اٹھائے جا سکیں۔آج 18 سوالات کے جوابات دیئے گئے۔

کانگریس اور ٹی ایم سی کے ارکان اسمبلی نے ہنگامہ آرائی کی ۔ دراصل پارلیمنٹ کا مانسون سیشن 19 جولائی سے شروع ہوا تھا، لیکن اب تک پارلیمنٹ کا کام ایک دن کے لیے بھی آسانی سے نہیں چل سکا ہے۔ پیگاسس جاسوسی کے مسئلے، مہنگائی اور کسانوں کے احتجاج پر اپوزیشن مسلسل حکومت کے خلاف نعرے بلند کر رہی ہے اور کام کاج روک کر فوری بحث کا مطالبہ کر رہی ہے۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ کبھی اسپیکر پر کاغذ پھینکنا، کبھی وزیر پر پھینکنا اور کبھی صحافی تک کاغذ پھینکنا، یہ جمہوریت کے لیے شرمناک واقعہ ہے۔

جبکہ وزیر اعظم نریندر مودی نے بھی کہا ہے کہ ہم بحث کے لیے تیار ہیں، پھر اپوزیشن بحث سے کیوں بھاگ رہی ہے؟ کیا اپوزیشن کے پاس بحث کے لیے زیادہ موضوع نہیں ہیں؟ کیا اپوزیشن ہندوستان کو پوری دنیا میں بدنام کرنے کی کوشش کر رہی ہے؟ انوراگ ٹھاکر نے کہاکہ وزیر ایوان میں بیان دیتا ہے اس کے ہاتھ سے کاغذ چھین لیا جاتا ہے اور پھاڑ دیا جاتا ہے۔ میں راہل گاندھی اور سونیا جی سے پوچھنا چاہتا ہوں کہ کیا نہرو جی، اندرا جی کے دور میں اپوزیشن کا ایسا کردار تھا؟ ہم بحث کا خیرمقدم کرتے ہیں لیکن ہم ایسے واقعات کی مذمت کرتے ہیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close