دیوبند

فیس کے بغیر کسی طلبہ یا طالبات کو امتحان سے محروم نہ کیا جائے،اسکولوں کالجوں کی میٹنگ میں اے ڈی ایم ڈاکٹر ارچنا کی ہدایت

دیوبند،15؍ ستمبر(رضوان سلمانی) اسکولوں وکالجوں میں والدین وسرپرستوں کی شکایات کو حل کرنے کے لئے اسکول ریڈریسل کمیٹی کی تشکیل کی جائے گی اس کمیٹی میں ادارہ کے پرنسپل والدین اور اسکولوں کے مینجر شامل ہونگے یہ کمیٹی تمام شکایات کو حل کرئیگی ،اگر والدین یاسرپرست مطمئن نہیں ہوتے ہیں تو وہ ڈی آئی او ایس کے ذریعہ ڈی ایف آرسی کے سامنے اپنے مسائل کے پیش کریں گے اسی کے ساتھ یہ ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ فیس کے بغیر کسی طلبہ یا طالبہ کو امتحان سے بے دخل نہ کیا جائے۔

تفصیل کے مطابق کلکٹریٹ احاطہ میں اے ڈی ایم انتظامیہ ڈاکٹر ارچنا دیوی ویدی نے سی بی ایس ای ،آئی سی ایس ای کے تعلیمی اداروں کے تمام پرنسپلوں اور منیجروں کے ساتھ ایک میٹنگ منعقد کی میٹنگ کے دوران ہدایات دیں گئیں کہ تمام پرنسپل والدین وسرپرستوں سے رابطہ قائم کرکے در پیش مسائل کو حل کریں اور کہا کہ فیس نہ دینے کی صورت میں کسی بھی طالب علم کو امتحان میں شرکت سے نہ روکا جائے اس کے علاوہ یہ حکم دیا گیا کہ تمام تعلیمی ادارہ اپنے اسکولوں وکالجوں میں داخل شدہ طالب علموں کی تعداد کا نقشہ تیار کرکے 20؍ستمبر تک انسپکٹر آف اسکول کے دفتر میں جمع کرادیں ۔ڈاکٹر ارچنا نے کہا کہ ہر کلاس سے کتنے طالب علم کم ہوئے اسی کی وجہ بھی بتائی جائے اور ایسے طلبہ وطالبات کی لسٹ فراہم کرائی جائے جن کے والدین یاسرپرست مالی دشواریوں کی وجہ سے اسکول کی فیس جمع نہ کرپارہے ہوں ۔

اس کے علاوہ اسکولوں وکالجوں میں صفائی کا پورا نظم رکھا جائے بچوں کو مچھروں وغیرہ سے بچانے کے لئے فاگنگ کرائی جائے اس کے علاوہ یہ کہا گیا ہے کہ اگر والدین وسرپرستوں کو فیس سے متعلق کوئی شکایت ہو تو وہ تحریری طور پر تفصیل لکھ کر دیں ۔اے ڈی ایم انتظامیہ نے اسکول وکالجوں کے پرنسپلوں سے کہا کہ طالب علموں سے متعلق والدین کی شکایات کو سنجیدگی سے نہیں لیا گیا تو اسکولوں وکالجوں کے خلاف کار روائی کی جائے گی جو کمیٹی تشکیل دی جائے گی اس کی ذمہ داری ہوگی کہ وہ والدین کی شکایات کا ازالہ کرے ۔اس موقع پر ڈی آئی او ایس رویدت ،پروگریسیو اسکول سوسائٹی سکریٹری سدھیر چودھری اور پائن ووڈ اسکول کے پرنسپل ڈاکٹر سنجیو جین وغیرہ موجود رہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close