دہلی

فیس بک پر فرضی اشتہار کے ذریعے ٹھگی، 3 ملزمان گرفتار

نئی دہلی،29جون (ہندوستان اردو ٹائمز) فیس بک پر گاڑی فروخت کرنے کا اشتہار دے کر لوگوں کو دھوکہ دینے والے 3 افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ایک افسر نے بدھ کو یہ معلومات دی۔ پولیس کے مطابق تینوں ملزمان، جن کی شناخت اکشے (27)، شیوم (22) اور آنند شرما کے طور پر ہوئی ہے، نے چوری شدہ رقم کو گھومنے پھرنے میں خرچ کر دی۔

تفصیلات پیش کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر آف پولیس (ساؤتھ ایسٹ) ایشا پانڈے نے بتایا کہ 9 جون کو لاج پت نگر پولیس اسٹیشن میں ایک شکایت موصول ہوئی تھی، جس میں شکایت کنندہ نے کہا تھا کہ اس کے ساتھ تین افراد نے اپنی گاڑی بیچنے کے بہانے اس کو 462000 روپے کا چونا لگا دیا۔شکایت کنندہ نے فیس بک پر فارچیونر کار کی فروخت کے حوالے سے اشتہار دیکھا اور اسے خریدنے کا منصوبہ بنایا، جس کے بعد اس نے مبینہ افراد سے رابطہ کیا۔

بیچنے والے نے اسے لاج پت نگر میں ملنے کو کہا۔ڈی سی پی نے کہا کہ جب شکایت کنندہ ان کے پاس گیا تو اس نے وہ کار بھی دیکھی جو اسے خریدنی تھی۔ کار کو 630000 روپے میں خریدنے کا سودا طے پایا گیا، جس میں سے اس نے انہیں 462000 روپے ادا کیے اور کہا کہ بقیہ رقم وہ بعد میں آر ٹی جی ایس کے ذریعے ٹرانسفر کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ ملزمان شکایت کنندہ کی طرف سے دی گئی نقدی لے کر اسی کار میں فرار ہو گئے۔شکایت کی بنیاد پر پولیس نے تعزیرات ہند کی دفعہ 406 (مجرمانہ طور پر اعتماد کی خلاف ورزی)، 420 (دھوکہ دہی) اور 120B (مجرمانہ سازش) کے تحت مقدمہ درج کیا اور تحقیقات کا آغاز کیا۔

اس سلسلہ میں ایک پولیس ٹیم تشکیل دی گئی تھی جس نے بیلنس کی رقم کی منتقلی کے لیے ملزمین کی طرف سے شکایت کنندہ کو دیئے گئے بینک اکاؤنٹ کی تفصیلات کا تجزیہ کیا۔ڈی سی پی پانڈے نے کہا کہ تجزیہ کے بعد پتہ چلا کہ رقم اکشے نامی شخص کے اکاؤنٹ نمبر پر منتقل کی گئی تھی۔ اس کا موبائل نمبر ہریانہ کے مہندر گڑھ میں کام کر رہا تھا۔ اس کے بعد چھاپہ مارا گیا اور ملزم اکشے کو ہریانہ سے گرفتار کیا گیا، جبکہ اس کے دو ساتھیوں شیوم اور آنند کو دہلی کے ساکیت سے گرفتار کیا گیا۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button