یوپی

عیدالاضحیٰ کے پیش نظر وزیر اعلیٰ یوگی کی میٹنگ، قربانی سے متعلق سخت ہدایت

اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے 6 جولائی کو ریاست میں نظامِ قانون سے متعلق ایک جائزہ میٹنگ میں عیدالاضحیٰ اور کانوڑ یاترا سمیت دیگر آئندہ تہواروں کا خصوصی ذکر کیا۔ انھوں نے کہا کہ ان تہواروں کے پیش نظر انتہائی مستعد اور محتاط رہنے کی ضرورت ہے تاکہ ریاست کا ماحول بگڑنے نہ پائے۔ وزیر اعلیٰ یوگی نے افسران کو سخت ہدایت دی ہے کہ وہ شرارت بھرے بیانات دینے والوں کے ساتھ ’قطعی برداشت نہ کرنے‘ کی پالیسی اختیار کریں اور ماحول خراب کرنے کی کوشش کرنے والے سماج دشمن عناصر کے ساتھ سختی کا مظاہرہ کریں۔

عیدالاضحیٰ اور قربانی سے متعلق وزیر اعلیٰ یوگی نے کچھ اہم نکات کی طرف افسران کی توجہ مبذول کرائی۔ انھوں نے کہا کہ قربانی کے لیے پہلے سے جو جگہ متعین کی گئی ہے، اس کے علاوہ کہیں بھی قربانی کی اجازت نہ دی جائے۔ خصوصاً انھوں نے متنازعہ مقامات پر قربانی کا جانور ذبح نہ کیے جانے کی ہدایت دی ہے۔ انھوں نے واضح لفظوں میں کہا کہ ’’ہر حال میں یہ یقینی بنائیں کہ کہیں بھی ممنوعہ مویشی کی قربانی نہ ہو اور متنازعہ مقامات پر قربانی نہ دی جائے۔‘‘

اپنی سرکاری رہائش پر ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سبھی زونل پولیس انسپکٹر جنرل، ڈویژنل کمشنر اور پولیس کمشنر کے ساتھ عیدالاضحیٰ، ناگ پنچمی، رکشا بندھن، ساون، کانوڑ یاترا وغیرہ کے پیش نظر نظامِ قانون سے متعلق جائزہ کیا۔ ایک سرکاری بیان کے مطابق انھوں نے افسران سے عیدالاضحیٰ اور کانوڑ یاترا سمیت آئندہ تہواروں کو لے کر کی گئی تیاریوں، منصوبہ بندی اور انتظامات کی جانکاری حاصل کی۔ اس موقع پر یوگی آدتیہ ناتھ نے افسران سے کہا کہ ’’گزشتہ دنوں رمضان ماہ میں جمعۃ الوداع کی نماز اور عید کے موقع پر مذہبی امور سے ٹریفک نظام متاثر نہیں ہوا تھا۔ کئی اضلاع میں جگہ کی کمی ہونے پر بہتر انداز میں کئی جماعتوں میں نماز ادا ہوئی۔ اس کوشش کی پورے ملک میں تعریف ہوئی ہے۔ اس بار عیدالاضحیٰ پر ہمیں یہی نظام نافذ رکھنا ہوگا۔ پیس کمیٹی کی میٹنگ کر لیں، میڈیا کی مدد لیں تاکہ امن اور خیر سگالی کا ماحول بنا رہے۔‘‘

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button