عجیب و غریب

کاروں کیساتھ جنسی تعلق قائم کرنیوالی عورت کی کہانی پر مبنی فلم’ کانز فلم فیسٹیول‘ میں ٹاپ پرائز لے اڑی

پیرس(مانیٹرنگ ڈیسک) فرانس میں ہونے والے کانز فلم فیسٹیول میں اس سال ایک ایسی فلم ٹاپ پرائز لے اڑی کہ لوگ دنگ رہ گئے۔

دی سن کے مطابق گزشتہ سال کورونا وائرس کی وجہ سے کانز فلم فیسٹیول منعقد نہیں ہو سکا تھا، تاہم اس سال فیسٹیول پوری شد و مد کے ساتھ منعقد ہوا اور اس بار نامزد ہونے والی فلموں کا اعلان بھی پہلے ہی کر دیا گیا، جن میں ’ٹیٹین‘ (Titane)نامی فلم بھی شامل تھی۔ یہ فلم ایک ایسی عورت کی کہانی پر مبنی ہے جو کاروں کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرتی ہے۔

حیران کن طور پر اس سال کی یہ متنازعہ ترین فلم فاتح قرار پائی اور ’پام ڈیور‘ پرائز اسے مل گیا۔ یہ فلم فرانسیسی ڈائریکٹر جولی ڈوکورناﺅ کی تھی۔ اس فلم کو ایوارڈ ملنے پر ایک اور ریکارڈ بھی قائم ہوا کہ کانز فلم فیسٹیول کی 74سالہ تاریخ میں اس فلم کے ذریعے کسی دوسری خاتون ڈائریکٹر کو یہ ایوارڈ ملا ہے۔ اس ایوارڈ کے بعد جولی ڈوکورناﺅ سمیت اب تک صرف 2ہی خواتین ڈائریکٹرز ایوارڈ حاصل کر سکی ہیں۔

رواں سال کانز فلم فیسٹیول میں ایک یہ ریکارڈ بھی قائم ہوا کہ جیوری کی سربراہی پہلی بار کسی سیاہ فام شخص کو دی گئی تھی۔ یہ شخص امریکی فلم ڈائریکٹر سپائیک لی تھے۔ ان سے ایک مضحکہ خیز غلطی بھی ہوئی، انہوں نے بہترین اداکار کے ایوارڈ کے لیے بھی غلطی سے ٹائٹین ہی کے نام کا اعلان کر دیا تاہم کچھ توقف اور فہرست کوازسرنوترتیب دے کر اس غلطی کو درست کیا گیا۔


ہماری خبریں اپنے واٹس ایپ پر پانے کے لیئے کلک کریں 

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close