عجیب و غریب

عالم دین کے تیسری شادی کی ’خواہش‘ کرنے پر اس کی دوسری بیوی نے مردانہ صفات سے ہی محروم کردیا

یوپی (ذرائع) ایک عالم دین کے تیسری شادی کی ’خواہش‘ کرنے پر اس کی دوسری بیوی نے اس کے ساتھ ایسا سلوک کر ڈالا کہ سن کر ہی دوسری شادی کے خواہش مند خوف سے کانپ اٹھیں۔ معتبر ذرائع کے مطابق یہ واقعہ  ریاست اترپردیش کے شہر مظفرنگرکے نواحی گاﺅں شکارپور کا ہے جہاں 57سالہ شخص وکیل احمد نے اپنی دوسری بیوی سے کہا کہ وہ ایک اور شادی کرنے جا رہا ہے۔

حضرہ نامی خاتون نے اپنے شوہر کو تیسری شادی سے باز رہنے کے لیے کئی بار کہا لیکن وہ بضد رہا کہ وہ تیسری شادی کرکے رہے گا، جس پر ایک رات جب وہ سو رہا تھا تو حضرہ نے کچن سے چھری اٹھائی اور اس کا پوشیدہ عضو کاٹ ڈالا اور اسے بیڈروم میں ہی تڑپتا چھوڑ دیا۔ زیادہ خون بہہ جانے کی وجہ سے اس کی موت واقع ہو گئی۔ حضرہ نے اپنے رشتہ داروں کی مدد سے وکیل احمد کی تدفین کا انتظام کر لیا لیکن ایک ہمسائے کو شک ہو گیا اور اس نے پولیس کو مطلع کر دیا۔حضرہ نے گرفتاری کے بعد اپنے جرم کا اعتراف کر لیا ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

2 Comments

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close