عجیب و غریب

عجیب و غریب : ناسا کی لیبارٹری سے چوری،چاندکے ٹکڑوں پر جنسی تعلق قائم کرنے کا خواہشمند پکڑا گیا

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) یہ تو آپ سبھی جانتے ہوں گے کہ چاند پر پہلا قدم کس نے رکھا لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ چاند پر سب سے پہلے جنسی تعلق کس نے قائم کیا؟ ڈیلی سٹار کے مطابق چاند کی سطح پر تو ایسا تاحال نہیں ہوا لیکن زمین پر لائے گئے چاند کے ٹکڑوں پر ایک عاقبت نااندیش یہ مکروہ کام کر چکا ہے۔ اس شخص کا نام تھاڈ رابرٹس ہے جو امریکہ کے خلائی تحقیقاتی ادارے ناسا میں ’انٹرن شپ‘ کر رہا تھا۔ وہ بہت ذہین نوجوان تھا اور کہا کرتا تھا کہ وہ مریخ پر جانے والے پہلے مشن کا حصہ بنے گا مگر 13جولائی 2002ءکو اس نے ناسا کی ایک لیبارٹری سے چاند کی سطح سے لائے گئے کچھ پتھر چرا کر لے گیا۔

رپورٹ کے مطابق رابرٹس چاند پر جنسی تعلق قائم کرنا چاہتا تھا۔ چونکہ اس کی یہ خواہش پوری نہیں ہو سکتی تھی لہٰذا اس نے یہ پتھر ہی چوری کر لیے تاکہ انہیں بیڈ پر پھیلا کر ان کے اوپر جنسی تعلق قائم کر سکے۔ یہ پتھر اپالو مشن کے خلاءباز چاند سے لے کر آئے تھے اور ناسا میں بہت سکیورٹی میں رکھے جاتے ہیں۔ یہ زمین پر انتہائی قیمت چیز تصور کیے جاتے ہیں چنانچہ رابرٹس نے جو چھوٹے چھوٹے پتھر چوری کیے ان کا وزن محض 101گرام تھا تاہم ان کی قیمت 2کروڑ 10لاکھ ڈالر کے لگ بھگ تھی۔ اس لحاظ سے یہ دنیا میں چوری کی سب سے بڑی وارداتوں میں سے ایک شمار کی جاتی ہے۔

ناسا کی لیب میں چوری کی اس واردات کی تحقیقات ہوئیں اور رابرٹس کو گرفتار کر لیا گیا۔ گرفتاری کے تین ماہ بعد اسے 8سال قید کی سزا سنا کر جیل بھجوا دیا گیا۔ تحقیقات کے دوران جب پولیس نے رابرٹس کے گھر پر چھاپہ مارا تو چاند کی سطح کے ان پتھروں کے علاوہ اس کے گھر سے ڈائنو سار کی ہڈیاں اور دیگر قدیم چیزیں بھی ملیں۔ڈائنو سار کی ہڈیاں اس نے امریکی ریاست اوٹاہ کے ایک میوزیم سے چوری کی تھیں۔رابرٹس، جس کی عمر اب 44سال ہے، اس نے جیل میں رہتے ہوئے ہی فزکس، انتھروپولوجی اور فلاسفی میں ڈگریاں حاصل کیں اور اب وہ کائنات کے ’لارج سکیل سٹرکچر‘ پر ملکہ رکھنے والا ماہر ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close