عجیب و غریب

آدم خور نے اپنی ہمسائی اور چار سالہ بچی کو قتل کر کے گوشت پکا کر اپنے گھر والوں کو کھلا دیا

نیویارک(ہندوستان اردو ٹائمز) امریکہ میں ایک آدم خور پکڑا گیاہے جس نے تین لوگوں کو ایسی سفاکیت سے موت کے گھاٹ اتارا اور پکا کر کھا گیا کہ سن کر ہی روح کانپ اٹھے۔ میل آن لائن کے مطابق امریکی ریاست اوکلاہوما کے شہر شکاشا کے رہائشی اس 42سالہ قاتل کا نام لارنس اینڈرسن ہے جس نے اپنے 67سالہ چچا لیون پائی، اپنی ہمسائی اینڈریا لین بلینکنشپ اور ایک چار سالہ بچی کائیوس یاٹس کو موت کے گھاٹ اتارا۔

ملزم نے اینڈریا کو اپنا آخری شکار بنایا جس کے بعد اس کو گرفتار کر لیا گیا۔ دوران تفتیش اس نے اپنے گھناﺅنے جرائم کا اعتراف کرتے ہوئے بتایا کہ اس نے اینڈریا کو اس کے گھر میں گھس کر خنجر کے وار کرکے قتل کیا۔ اس نے اینڈریاکا دل نکالا اور اسے آلوﺅں کے ساتھ پکا کر خود بھی کھایا اور اپنی فیملی کو بھی کھلایا۔ ملزم نے پولیس کو بتایا کہ اس نے اینڈریا کا دل اس لیے اپنی فیملی کو کھلایا کیونکہ اس طریقے سے وہ ان کے جسموں میں سرایت کر چکی بدروحیں نکالنا چاہتا تھا۔

رپورٹ کے مطابق ملزم کو 2017ءمیں اسلحے اور منشیات سے متعلقہ جرائم میں 20سال قید کی سزا سنائی گئی تھی تاہم اسے سزا پوری ہونے سے پہلے ہی رواں سال جنوری کے آغاز میں جیل سے رہا کر دیا گیا تھا اور اس نے رہائی کے بعد ان تین لوگوں کو موت کے گھاٹ اتار ڈالا۔ ملزم کو قبل از وقت جیل سے رہا کرنے کے انکشاف پر شہریوں میں غم وغصہ پایا جا رہا ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close