عجیب و غریب

وہ جگہ جہاں ہزاروں خواتین کو ٹائیگرز نے بیوہ بنا دیا

نئی دہلی(ہندوستان اردو ٹائمز)  ریاست مغربی بنگال میں ٹائیگرز نے ہزاروں خواتین کو بیوہ بناڈالا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق مغربی بنگال کے صرف ایک ضلع ساﺅتھ 24پرگنہ میں ایک اندازے کے مطابق ٹائیگرز اب تک 3ہزار سے زائد خواتین کو بیوہ کر چکے ہیں۔ ان خواتین کے شوہر جنگل میں کام کے لیے گئے اور زندہ واپس نہیں لوٹے۔ گزشتہ سال اپریل سے اب تک اس ضلع میں 60لوگ ٹائیگرز کے ہاتھوں موت کے منہ میں جا چکے ہیں۔

علاقے کے رہائشی پردیپ چترجی کا کہنا ہے کہ ”دیہات کے اکثر لوگ مچھلیاں پکڑنے اور جنگل سے شہد اکٹھا کرنے کا کام کرتے ہیں اور انہی کاموں کے لیے جب وہ جنگل جاتے ہیں، ٹائیگرزان پر حملہ آور ہو جاتے ہیں۔ جنگل میں مختلف کام کرنے والوں کی تعداد 60ہزار سے زائد ہے۔ ان میں سے صرف ایک چوتھائی کے پاس ہی پرمٹ ہے۔ باقی غیرقانونی طور پر جنگل میں جاتے ہیں چنانچہ اگر ان میں سے کسی کو ٹائیگرز مار بھی ڈالیں تو ان کے لواحقین حکومت سے زرتلافی کا مطالبہ نہیں کرتے کیونکہ انہیں خود قانونی کارروائی کا خوف ہوتا ہے۔“

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close