عجیب و غریب

وہ لڑکی جو نئے کپڑے ایک دفعہ پہننے کے بعد دھوتی نہیں بلکہ انہیں پھینک دیتی ہے

لندن(ہندوستان اردو ٹائمز) بیری اور ٹونی برطانیہ کے پہلے ہم جنس پرست مرد ’والد‘ تھے جنہوں نے بچی پیدا کی۔ اب ان کی یہ بچی 21سال کی خوبرو لڑکی بن چکی ہے اور اس نے اپنی وارڈروب کے متعلق ایسا انکشاف کیا ہے کہ سن کر یقین کرنا مشکل ہو جائے۔ سیفرون ڈریویٹ بارلو نامی اس لڑکی کا کہنا ہے کہ وہ ایک لباس صرف ایک ہی بار پہنتی ہے اور پھر پھینک دیتی ہے۔اس نے کبھی کوئی لباس دھو کر دوسری بار نہیں پہنا۔

کروڑپتی ہم جنس پرست مردپارٹنرز، جن کی اب علیحدگی ہو چکی ہے، کی اس اکلوتی بیٹی کا کہنا ہے کہ میں ایک بار لباس پہننے کے بعد اسے اپنی سہیلیوں کو دے دیتی ہوں۔ اس کے باوجود میری وارڈ روپ ڈیزائنر ملبوسات سے بھری پڑی ہے۔ اب تک میں لگ بھگ 10لاکھ پاﺅنڈ کے ملبوسات خرید چکی ہوں گی۔ میں فار ایور 21(Forever 21) اور پریمارک (Primark)جیسی ’گھٹیا‘ دکانوں پر شاپنگ ہی نہیں کرتی۔ان کے کپڑے انتہائی ادنیٰ درجے کے ہوتے ہیں۔میں ایک بار اپنی کزنز کے ساتھ ان دکانوں پر گئی تھی۔ اس کے بعد میں کبھی وہاں نہیں گئی۔“

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close