عجیب و غریب

دہلی میں کشمیری لڑکی کاالزام،مکان مالک نے دہشت گردکہہ کربدسلوکی کی،مقدمہ درج

نئی دہلی 15اکتوبر(آئی این ایس انڈیا) دارالحکومت دہلی میں ایک چونکا دینے والا معاملہ سامنے آیا ہے۔ دہلی میں کرائے کے مکان میں رہائش پذیر کشمیری لڑکی نے الزام لگایا ہے کہ مکان مالک اور دیگرنے نسل پرستانہ تبصرے کیے اور ان کے ساتھ بدسلوکی کی۔ خاتون نے ان الزامات کاانکشاف ایک ٹویٹ میں کیا ، جس کے بعد دہلی خواتین کمیشن اس معاملے میں حرکت میں آگیا ہے۔اب دہلی پولیس بھی اس معاملے پر سرگرم ہوگئی ہے اور مکان مالک کے خلاف مقدمہ درج کیا جائے گا۔ اس خاتون نے بدھ کی دیر رات امرکالونی پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی ، جس کے بعد پولیس نے کارروائی کی۔دہلی میں مقیم اس خاتون نے ٹویٹرپرکچھ تصاویرپوسٹ کرتے ہوئے یہ الزامات لگائے۔ جس میں بتایاگیاہے کہ مکان مالک اسے دہشت گردکہتے ہیں اوردیگرتبصروں سے اسے ہراساں کرتے ہیں۔ اس ٹویٹ کے سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد دہلی خواتین کمیشن کی سربراہ سواتی مالیوال نے اس معاملے پر نوٹس لیاہے اورمددکی یقین دہانی کرائی ہے۔خاتون نے اپنے ٹویٹ میں لکھا ہے کہ اس کا مکان مالک دوسرے شخص کے ساتھ اس کے کمرے میں آیا اور اسے دہشت گرد کہناشروع کردیا۔ اس کے علاوہ فرنیچرکی توڑ پھوڑ کی گئی۔ ان کاالزام ہے کہ انہوں نے دھکابھی دیاہے۔ اب دہلی پولیس نے اس معاملے میں کارروائی کی ہے اورمکان مالک کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close