عجیب و غریب

دہلی: آیشمان منصوبہ کی فرضی ویب سائٹ بنا کر لوگوں کے ساتھ دھوکہ دہی کے الزام میں چار گرفتار

نئی دہلی،یکم جون ( آئی این ایس انڈیا ) آیشمان منصوبہ کی فرضی ویب سائٹ بنا کر لوگوں کو نوکری دلانے کے نام پر فراڈ کرنے والے چار افراد کو دہلی پولیس کی سائبر سیل نے گرفتار کیا ہے۔ان لوگوں نے 4000 سے زیادہ لوگوں سے دھوکہ دہی کی تھی اور رجسٹریشن کرانے کے نام پر 300 سے 500 روپے وصول کئے تھے۔یہی نہیں ان لوگوں نے آن لائن گھوٹالے کو انجام دینے کے لئے نیم شہری اور دیہی علاقوں میں کیمپوں کا انعقاد بھی کیا تھا۔گرفتار لوگوں میں ایک عورت بھی شامل ہے۔ان چاروں کو پوچھ گچھ کے لئے پولیس ریمانڈ پر لایا گیا ہے جہاں ان سے پوچھ گچھ جاری ہے۔

دہلی پولیس کے اعلی افسر کے مطابق جن لوگوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔ وہ تمام لوگ اترپردیش کے رہنے والے ہیں۔ پولیس افسر کے مطابق دہلی پولیس کی اسپیشل سیل کی سائبر برانچ کو قومی ہیلتھ اتھارٹی، ایشمان بھارت اور وزیر اعظم منصوبہ کے تحت حکومت کی طرف سے ایک شکایت موصول ہوئی تھی جس میں بتایا گیا تھا کہ اتھارٹی کو عوام کے کی جانب سے مرکزی حکومت کی ایک جعلی ویب سائٹ بنا کر لوگوں کو بھرتی کرائے جانے کے نام پر فراڈ کئے جانے کا پتہ چلا ہے۔

یہ بھی پتہ چلا ہے کہ اس فرضی ویب سائٹ کے ذریعے لوگوں سے پیسہ لیا گیا ہے شکایت کی بنیاد پر دہلی پولیس کے سائبر سیل نے اپنی تحقیقات شروع کی اور تحقیقات کے دوران حکام کو پتہ چلا کہ اس فرضی ویب سائٹ کے ذریعے 5000 سے زائدنوکریاںدہلی ہریانہ اتر پردیش بہار وغیرہ ریاستوں میں دکھائی گئی تھی۔ان کوحاصل کرنے کے لئے رجسٹریشن کرانے کو کہا گیا تھا اور اس کے لئے لوگوں سے 300 سے 500 بھی وصول کئے گئے تھے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close