عجیب و غریب

شادی شدہ عاشق کے کہنے پر یوٹیوب دیکھ کر لڑکی نے کیا اسقاط حمل، سنسنی خیز معاملہ دیکھ کر پولیس کے بھی اڑگئے ہوش

ناگپور کے یشودھارا تھانہ علاقے میں ایک لڑکی نے یوٹیوب پر دیکھ کر اسقاط حمل کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ پیوس نے بتایا کہ ملزم کا نام سہیل خان ہے. وہ ناگپور کے نواز نگر کا رہائشی ہے۔ وہ شادی شدہ ہے ، شادی کرنے کے بعد بھی اس کا یشودھارا تھانہ علاقہ میں ایک لڑکی کے ساتھ محبت کا معاملہ تھا۔ سہیل خان سے محبت کی وجہ سے لڑکی حاملہ ہوگی۔ حاملہ ہونے کے دوران لڑکی نے سہیل خان سے کہا کہ وہ جلد از جلد شادی کر لے۔ ڈاکٹروں نے لڑکی کو احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ دیا۔اس دوران لڑکی کا خاندان ممبئی چلا گیا ، وہ اکیلی گھر پر رہی اور کام کرتے ہوئے وہ فرش پر گر گئی اسے پیٹ میں درد ہونے لگا ، پھر اس نے موبائل پر سہیل کو اطلاع دی۔

اسقاط حمل
علامتی تصویر

سہیل نے یوٹیوب دیکھ کر لڑکی کو اسقاط حمل کا مشورہ دیا لڑکی نے بات مان لی۔ اس واقعے کے بعد سہیل نے لڑکی سے فاصلہ رکھا ، جب بھی لڑکی فون کرتی ، سہیل اس کا فون کاٹ دیتا ، یہی وجہ ہے کہ لڑکی دباؤ میں تھی ، اسے مستقبل کی فکر تھی۔ جب خاندان ممبئی سے گھر لوٹا تو انہوں نے لڑکی کے علاج کے بارے میں دریافت کیا ، لیکن لڑکی نے گھر والوں کو ساری حقیقت بتائی۔

گھر والوں نے سہیل کو شادی پر راضی کر لیا لیکن سہیل کے شادی شدہ ہونے کا معاملہ سامنے آگیا۔ سہیل نے پہلی بیوی کو طلاق دے دی ہے اور اس نے دوسری شادی کی ہے ۔ اس کا ایک 2 سالہ بیٹا بھی ہے۔ جب معاملہ یشودھارا تھانے میں پہنچا تو یوٹیوب پر اسقاط حمل کا معاملہ دیکھنے کے بعد پولیس حرکت میں آ گئی اور ملزم کے خلاف زبردستی اسقاط حمل کے ساتھ بچی کے ساتھ زیادتی کا مقدمہ درج کیا۔ ذرائع کے مطابق جب اسقاط حمل کیا گیا تو بچی مکمل 6 ماہ تک حاملہ تھی اور اس طرح اسقاط حمل زندگی کے لیے خطرناک تھا۔ پولیس مزید کارروائی کر رہی ہے۔

(نیوز ۱۸ اردو کے شکریہ کے ساتھ)

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close