سیرت و شخصیات

جرنسلٹ کام کے : آئیے، جیوتی یادو سے ملیے! عاقب انجم عافی

جیوتی یادو نے 2016 سے جرنلزم کے میدان میں طبع آزمائی کی اور مارچ 2019 سے دی پرنٹ سے وابستہ ہیں. ہریانہ کے علاقہ مہیندرگڈھ میں 17 دسمبر 1994 کو ایک غریب گھرانے میں پیدا ہونے والی یہ ہونہار لڑکی اپنی تعلیمی کارکردگی کی وجہ سے دہلی یونیورسٹی پہونچی. دہلی یونیورسٹی کے دولت رام کالج سے جیوتی نے انگریزی ادب میں گریجویشن اور پوسٹ گریجویشن کی ڈگریاں حاصل کیں. جیوتی لکھنے سے مرعوب ہےـ انقلاب کے لئے لکھتی ہیں. لکھنا شروع کیا تو دی للنٹاپ سے بلاوا آیا اور تقریباً ستمبر 2016 سے مارچ 2017 تک اس ادارہ سے وابستہ رہیں. جیوتی اس کے بعد News18 سے بھی وابستہ رہیں اور اپنے قلم کے جوہر دکھائے اور دسمبر 2017 میں اس ادارہ سے آگے بڑھ کر انشارٹس سے وابستہ ہوئی. فروری 2019 میں دی پرنٹ سے وابستہ ہوئی. جیوتی ایک انقلابی صحافی ہیں. جیوتی اجتماعی عصمت دری کے واقعات کو دنیا کے سامنے لاتی ہیں اور انقلاب و انصاف کی صدا بلند کرتی ہیں. جیوتی سامپردایک دھنگے بھی اپنے دائرہ کار میں لاتی ہیں. سیاست پر لکھتی ہیں اور کہیں جنسی اور سماجی انصاف پر لکھتی ہیں. جیوتی وزارت ترقی نسواں و اطفال اور اسکل ڈیولوپمینٹ منسٹری کے خبریں بھی اپنے دائرہ کار میں لاتی ہیں. جیوتی اس ڈجٹل عہد میں بدلتے ہندوستان پر لکھتی ہیں.
دی پرنٹ ہندی پر جیوتی ہفتہ وار کالم لکھتی ہیں. یہ بلاگ ’مری جان مجھے خبر ہے‘ نام سے موصوف ہے.
ان دنوں جس طرح دیگر حق پرست صحافی آر ایس ایس اور بھاجپ کی آنلائن ٹرول آرمی کے دہانے پر ہیں، جیوتی پر سوشل میڈیائی حملے ہوتے رہتے ہیں.

مضمون نگار جامعہ ملیہ اسلامیہ کا طالب عالم ہے اور تاریخ سے دلچسپی رکھتا ہےـ مضمون نگار سوانحی دنیا کا ایک محقق ہےـ

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close