حیدرآباد

سکندر آباد : شو روم میں آتشزدگی ، آٹھ افراد ہلاک

حیدر آباد ، 13ستمبر ( ہندوستان اردو ٹائمز) تلنگانہ کے سکندرآباد میں پیر کی رات ایک الیکٹرک شوروم میں زبردست آگ لگنے سے ایک خاتون سمیت کم از کم آٹھ افراد ہلاک ہو گئے۔ یہ لوگ شوروم کے اوپر والے لاج میں ٹھہرے ہوئے تھے۔ حیدرآباد کمشنر سی وی آنند نے کہاکہ پہلی اور دوسری منزل پر رہنے والے لوگ گراؤنڈ فلور پر الیکٹرک اسکوٹر ری چارجنگ پوئنٹ میں لگنے والی آگ کے دھوئیں میں پھنس گئے۔ متعدد افراد نے عمارت سے چھلانگ لگا دی ،جنہیں مقامی شہریوں نے بچا لیا۔وزیر تلاسانی سرینواس یادو اور وزیر داخلہ محمد محمود علی نے رات میں جائے حادثہ کا دورہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ حادثے کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔ سری نواس یادو نے کہا کہ شبہ ہے کہ آگ شارٹ سرکٹ کی وجہ سے لگی اور تیزی سے اوپر والے لاج میں پھیل گئی اور وہاں ٹھہرے ہوئے مہمانوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔مارکیٹ پولیس اسٹیشن کے ایس ایچ او وائی ناگیشورا راؤ نے بتایا کہ پولیس نے عمارت کے مالک کیخلاف ایف آئی آر درج کی ہے، جس کے زیریں منزل پر الیکٹرک بائیک کا شوروم اور اوپر لاج ہے۔ ایس ایچ او نے کہا کہ حادثے کے وقت لاج میں چار منزلوں پر 25 گاہک تھے اور صرف ایک ہی باہر نکل سکا تھا،باقی اندر پھنس گئے تھے۔ ہم نے مالک راجندر سنگھ بگا اور ان کے دو بیٹوں کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی ہے۔ اس سلسلے میں تفتیش جاری ہے۔

مرنے والوں میں سے کچھ کا تعلق چنئی، نئی دہلی، کولکاتہ اور وجئے واڑہ سے ہے۔عمارت میں پھنسے 25 افراد میں سے 15 کے قریب بچ کرنکلنے میں کامیاب ہو گئے جن میں سے دو نے کھڑکی سے چھلانگ لگا دی۔ فائر فائٹرز نے کم سے کم چھ دیگر افراد کو سیڑھیوں سے بچایا اور دم گھٹنے سے بے ہوش ہونے والے دو افراد کو مقامی ہسپتال میں داخل کرایا گیا۔بتایا جاتا ہے کہ آتشزدگی کا واقعہ رات 10 بجے پیش آیا، ئی اور پاسپورٹ آفس کے قریب واقع عمارت کی چار منزلوں کے اوپر ایک لاج اور ایک ریستوران تک پھیل گئی۔ لاج کے عملے اور مہمانوں نے آگ اور دھواں نکلتا دیکھ کر فائر ڈیپارٹمنٹ کو اطلاع دی۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button