اہم خبریں

رکن اسمبلی راہل بوندرے سمیت ۲۲۹ افراد کیخلاف کیس درج ایم ایل اے سمیت کارکنان کی خودسپردگی

رکن اسمبلی راہل بوندرے سمیت ۲۲۹ افراد کیخلاف کیس درج
ایم ایل اے سمیت کارکنان کی خودسپردگی

فوٹو بشکریہ ذوالقرنین احمد

۵ مارچ
چکھلی ضلع بلڈانہ
ذوالقرنین احمد

گزشتہ ہفتے شہر میں بی جے پی اور کانگریس کے درمیان ہوئی لفظی جھڑپ نے فساد کا رخ اختیار کرلیا تھا جس کو پولس نے بروقت کاروائی کرکے قابو میں کیا اور ۲۵۰ کے قریب افراد پر کیس درج کیا گیا تھا جس میں دونوں فریقین کے کارکنان شامل ہے پولس نے گرفتاری کی مہم تیز کردی تھی اور شہر کے ماحول کو خراب ہونے سے قبل بروقت کاروائی کی۔ کیس درج ہونے کے بعد دونوں فریقین کے کارکنان فرار تھے ۳ مارچ کو دوپہر ۴ بجے مقامی انورادھا انجینئرنگ کالج سے رکن اسمبلی راہل بوندرے کو گرفتا کیا گیا۔
سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے پر ایم ایل اے راہل بوندرے سمیت ۲۲۹ افراد کے خلاف کیس درج کرلیا گیا دو ہفتے قبل چکھلی تعلقہ کے دھوترا بھنگوجی دیہات کی ضلع پریشد اسکول میں ۲۲ فروری کے ایک پروگرام میں کانگریس کے ضلع صدر رکن اسمبلی راہل بوندرے اور بی جے پی کی ضلع پریشد خاتون اور بہبودی اطفال کمیٹی کی چیرمین شویتا مہالے کے درمیان لفظی جھڑپ ہوئی تھی جس کا اثر شہر بھرمیں دیکھائی دیا بی جے پی اور کانگریس کے فریقین نے مقامی پولس اسٹیشن میں معاملے کو لیکر ہنگامہ کھڑا کردیا تھا اور پولس پر پتھراؤ کیا پولس کو حالات پر قابو پانے کیلئے لاٹھی چارج کرنا پڑا پی ایس آئی موہن پاٹل کی شکایت پر رکن اسمبلی سمیت دونوں فریقین کے ۲۲۹ کارکنان کیخلاف سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے پر کیس درج کرلیا گیا تھا جس کے بعد پولس نے مطلوبہ افراد کی گرفتاری کیلئے مہم تیز کردی تھی جس میں رکن اسمبلی راہل بوندرے سمیت دونوں فریقین کے کارکنان شامل ہیں در اثنا رکن اسمبلی راہل بوندرے سمیت کانگریس کارکنان نے خودسپردگی کرلی۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close