یوپی

رام نگری ایودھیا میں 7 سال کی معصوم سے عصمت دری، سنگین حالت میں اسپتال میں داخل

اتر پردیش کے ایودھیا ضلع میں سات سالہ بچی کے ساتھ مبینہ طور پر عصمت دری کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اسے سنگین حالت میں مقامی اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ ملزم کی شناخت رام مانجھی کی شکل میں ہوئی ہے اور اسے گرفتار کر جیل بھیج دیا گیا ہے۔ ایودھیا کے پولیس سپرنٹنڈنٹ شیلیش پانڈے کے مطابق لڑکی اپنی عمر کے دیگر بچوں کے ساتھ کھیل رہی تھی۔ جب وہ کئی گھنٹے بعد بھی گھر نہیں لوٹی تو گھر والوں نے اس کی تلاش شروع کی۔ دیر رات مقامی کوتوالی تھانہ حلقہ کے بیراگ پورہ محلے میں متاثرہ خون میں شرابور پڑی ہوئی ملی۔

پولیس کو فوراً اطلاع دی گئی اور متاثرہ کو اسپتال میں داخل کرایا گیا۔ پانڈے نے کہا کہ اس سلسلے میں بڑے پیمانے پر تلاشی مہم شروع کی گئی اور سی سی ٹی وی فوٹیج کی بنیاد پر ملزم کی شناخت کی گئی۔ ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ پاس میں ہی کام کرنے والے ملزم نے بچی کو تنہا پایا اور ایک سنسان جگہ پر لے گیا جہاں اس نے اس کے ساتھ عصمت دری کی تھی۔

پولیس سپرنٹنڈنٹ نے کہا کہ جب متاثرہ نے شور مچایا تو ملزم بھاگ گیا۔ اسپتال کے ڈاکٹروں نے کہا کہ لڑکی کی حالت سنگین ہے اور اس کی شرمگاہ میں چوٹیں آئی ہیں۔ خون بھی بہت زیادہ بہہ گیا ہے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button