راجستھان

گائے کی اسمگلنگ کے شک میں ہجوم نے ایک شخص کو کیا قتل ، دوسرے کی حالت تشویشناک

جے پور،14؍ جون (ہندوستان اردو ٹائمز) راجستھان کے چتوڑ گڑھ میں گائے کی اسمگلنگ کے الزام میں ایک شخص کو پیٹ پیٹ کر ہلاک کردیا گیا۔ جبکہ دوسرے کی حالت تشویشناک ہے۔ مقتول مدھیہ پردیش کے اچل پور کا رہائشی ہے۔ یہ واقعہ اتوار کی نصف شب کو پیش آیا۔گایوں کولے جانے والی گاڑی میں دو افراد سوار تھے۔ جب وہ گاڑی لے کر بیگو نامی جگہ پر پہنچے تو ہجوم نے انہیں گھیر لیا اور گائے کی اسمگلنگ کے الزام میں ان دونوں کو پیٹنا شروع کردیا۔ پٹائی کی وجہ سے بابو لال بھیل کی اسپتال میں علاج کے دوران موت ہوگئی، جبکہ دوسرے کو زخمی حالت میں اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے، جہاں اس کی حالت تشویشناک ہے۔

راجستھان پولیس نے اس سلسلے میں کچھ لوگوں کو حراست میں لیا ہے۔ ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل پولیس کرائم روی پرکاش نے بتایا کہ 13-14 جون کی درمیانی شب کو دو افراد گائے لے کر ضلع چتورور گڑھ کے بل کھنڈا چوراہے سے مدھیہ پردیش جارہے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ ان دو افراد پر ہجوم نے حملہ کیا۔ ان میں سے ایک 25سالہ بابو بھیل اسپتال میں علاج کے دوران چل بسا۔ دوسرے زخمی کی شناخت پنٹو بھیل کے نام سے ہوئی ہے۔انہوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں چتوڑ گڑھ پولیس نے سات آٹھ افراد کو حراست میں لیا ہے اور پوچھ گچھ کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس اس معاملے میں ملزم کی شناخت کرکے جلد سے جلد کارروائی کرے گی اور ملزم کو گرفتار کیا جائے گا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close