دیوبند

پولیس کا کام عوام کی حفاظت کرنا ہے لیکن مظفرنگر میں لوگوں کو پولیس کے ظلم کا شکار ہونا پڑا

پرینکا گاندھی نے آج مظفرنگر میں متأ ـثرین سے ملاقات کی

دیوبند، 4؍ جنوری (رضوان سلمانی) کانگریس پارٹی کی قومی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی آج صبح اچانک مظفرنگر پہنچی جہاں انہوں نے شہریت ترمیمی قانون کے تحت پرامن احتجاج کررہے مظاہرہ کے دوران پولیس کے تشدد کا شکار ہوئے افراد سے ملاقات کی۔ سب سے پہلے پرینکا گاندھی سادات ہوسٹل کے ذمہ دار مولانا اسعد کے گھر پہنچ کر دیگر متأـثرین سے گفتگو کی ۔ پرینکا گاندھی کے ساتھ کانگریس پارٹی کے ریاستی نائب صدر اور سابق اسمبلی رکن پنکج ملک ، سابق اسمبلی رکن عمران مسعود ، کانگریس کے نوجوان لیڈر سعد صدیقی وغیرہ موجود تھے۔ پرینکا گاندھی نے ان کے علاوہ مظاہرہ کے دوران پولیس کی بربریت کا شکار ہوئے دیگر لوگوں سے بھی ملاقات کی۔ اس دوران پرینکا گاندھی نے کہا کہ مولانا اسعد نے مجھے بتایا کہ پولیس نے مدرسہ کے اندر گھس کر طلبہ کو بے رحمی سے پیٹا اور پھر انہیں جیل میں ڈال دیا۔ پرینکا گاندھی نے کہا کہ جن متأثرین سے میری ملاقات ہوئی ہے ان میں کسی کا ہاتھ ٹوٹا ہے اور کسی کی ٹانگوں میں پٹی بندھی ہوئی ہے۔ پرینکا گاندھی کے مطابق متأثرہ افراد کا کہنا ہے کہ پولیس نے گھروں میں گھس کر لوگوں کے ساتھ مارپیٹ کی اور توڑ پھوڑ کی۔ پرینکا گاندھی نے بتایاکہ پولیس نے مظفرنگر میں بڑا ظلم کیا ہے اور حاملہ عورت اور اس کے معصوم بچے تک کو نہیں بخشا ۔ پرینکا گاندھی نے کہا کہ ہم کوشش کریں گے کہ جہاں جہاں ناانصافی ہوئی ہے ہم وہاں جائیں گے اور متأثرین کی مدد کریں گے۔ پرینکا گاندھی کا کہنا تھا کہ پولیس کا کام عوام کی حفاظت کرنا ہے لیکن یہاں تو الٹا ہوا ہے اور لوگوں کو پولیس کے ظلم کا شکار ہونا پڑا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ احتجاج کرنا ہرانسان کا قانونی حق ہے مگر موجود ہ حکومت ان سے یہ حق بھی چھین رہی ہے۔ اترپردیش میں ہوئی ہنگامہ آرائی کے سوال پر پرینکا گاندھی نے کہا کہ میں نے اترپردیش کے گورنر کو ایک تفصیلی مکتوب ارسال کیا ہے اور میں نے پوری تفصیل سے گورنر کو آگاہ کیا ہے کہ اترپردیش پولیس نے بے قصور عوام کو کس طرح اپنے ظلم کا شکار بنایا ہے ۔ پرینکا گاندھی نے کہا کہ پولیس نے بچوں تک کو نہیں بخشا اور انہیں بھی جیل میں ڈال دیا گیا ہے جو بہت غلط بات ہے ۔ پاکستان میں گوردوارہ پر ہوئے پتھرائوکے سوال پر پرینکا گاندھی نے کہا کہ جہاں بھی غلط ہوتا ہے وہ غلط ہے ، غلط کام کسی کو نہیں کرنا چاہئے۔ پرینکا گاندھی نور محمد کے گھر بھی پہنچی اور وہاں پر بھی متأـثرین سے گفتگو کی اور انہیں ہر ممکنہ مدد کی یقین دہانی کرائی۔ واضح ہو کہ پرینکا گاندھی کا قافلہ نہر کی پٹری سے ہوتے ہوئے آج مظفرنگر پہنچا جہاں مظاہرہ کے دوران مارے گئے افراد کے اہل خانہ سے انہو ںنے ملاقات کی ۔ اس دوران کانگریس کے سابق ریاستی نائب صدر عمران مسعود کا کہنا تھا کہ کانگریس پارٹی ہر مظلوم کے ساتھ ہے اور ان کے حق کی لڑائی برابر لڑتی رہے گی ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کبھی پیچھے نہیں ہٹی ہے اور آج بھی کانگریس ہی مظلوموں کا ساتھ دے رہی ہے ۔ کانگریس کے سینئر لیڈر سعد صدیقی نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے ہمیشہ سبھی طبقات کا ساتھ دیا ہے اور سبھی کو ساتھ لے کر چلنے میں یقین رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کے قومی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی ہر مظلوم کے گھر جارہی ہیں اور انہیں یقین دہانی کرارہی ہیں کہ پارٹی ان کے ساتھ کھڑی ہے۔ واضح ہو کہ کانگریس پارٹی کی قومی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی سی اے اے کی مخالفت میں ہوئے مظاہرے کے دوران پولیس نے مظاہرین پر لاٹھی چارج کرکے بری طرح مارا اور ان کے گھروں میں توڑ پھوڑ بھی کی تھی جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہوئی تھی ۔ اسی کے پیش نظر آج پرینکا گاندھی مظفرنگر پہنچی اور انہوں نے متأثرین سے ملاقا ت کی۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close