دیوبند

ضلع مجسٹریٹ اکھلیش سنگھ نے جامعہ طبیہ میڈیکل کالج میں واقع آئی سو لیشن وارڈ کا معائنہ کیا

انڈونیشیا کے 12افراد کی رپورٹ آئی نگیٹیو

دیوبند 3؍ اپریل (رضوان سلمانی) پوری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لینے والے کورونا وائرس سے متأثر افراد کو محفوظ رکھنے کے لئے جگہ جگہ آئی سو لیشن وارڈ بنائے گئے ہیں ۔ دیوبند میں جی ٹی روڈ پر واقع جامعہ طبیہ میڈیکل کالج کو ضلع انتظامیہ کی جانب سے آئی سو لیشن یونٹ بنایا گیا تھا ، اس میں غیرممالک سمیت ممکنہ متأثرہ 88افراد کو رکھا گیا ہے، جہاں ان کے لئے تمام احتیاطی تدابیر فراہم کرائی جارہی ہیں۔ آج سہارنپور کے ڈی ایم اکھلیش سنگھ اور ڈپٹی سی ایم او اور ایس ڈی ایم نے جامعہ طبیہ میں قائم کردہ آئی سو لیشن یونٹ کا معائنہ کیا او روہاں پر رکھے گئے تمام متأثرین کو دیکھا اور وہاں کے انتظامات کا جائزہ لیا اور اطمینان کا اظہار کیا۔ اس موقع پر ضلع مجسٹریٹ اکھلیش سنگھ نے متأثرہ افراد کی دیکھ بھال پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے یہ ہدایت دی کہ وارڈ میں داخل تمام افراد کو تمام ممکنہ سہولیات مہیا کرائی جائیں اور ان کے لئے ضروری اشیاء وقت پر مہیا کرائی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر کسی بھی افراد کو کوئی ضرورت ہو اور وہ اپنے پیسے سے کچھ منگانا چاہے تو ان کو لاکر دیا جائے ۔ سی ایم او ڈاکٹر بی ایس سوڈھی نے بتایا کہ جامعہ طبیہ کے آئی سو لیشن وارڈ میں داخل انڈو نیشیا کے 12افراد کا کورونا ٹیسٹ کرایا گیا ، خوشی اور اطمینان کی بات یہ ہے کہ تمام 12افراد کا کورونا ٹیسٹ نگیٹیو آیا ہے۔ کالج کے سکریٹری ڈاکٹر انور سعید نے بتایا کہ وارڈ میں موجود تمام افراد کی 24گھنٹے طبی نقطہ نظر سے بہترین دیکھ بھال کی جارہی ہے اور تمام حفاظتی تدابیروں کا سختی سے نفاذ کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے آئی سو لیشن وارڈ میں تعینات میڈیکل ٹیم کے خدمت خلق کے جذبے کی تعریف کی اور کہا کہ میڈیکل ٹیم اور انتظامیہ کی جانب سے اچھا تعاون مل رہا ہے ۔ ڈاکٹر انور سعید نے امید ظاہر کی کہ جلد ہی حالات سازگار ہوجائیں گے اور مہلک مرض پر قابو پالیا جائے گا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close