دیوبند

دیوبند : کرونا وائرس سے متأثر ہونے کی خبر سے مچی افراتفری

انتظامیہ اور سی ایچ سی انچارج نے معاملے سے کیا انکار

دیوبند،25مارچ (رضوان سلمانی) شہر کے ایک پرائیویٹ نرسنگ ہوم میں بخار کے علاج کے لئے پہنچے ایک شخص کے کرونا وائرس سے متأثر ہونے کے شک میں افراتفری مچ گئی ۔ یہ معاملہ انتظامیہ تک پہنچا لیکن اس معاملے کی ابھی تک کوئی تصدیق نہیں ہوسکی ہے۔ جب کہ نرسنگ ہوم کے مالک ڈاکٹر نے اپنے نرسنگ ہوم کو فوراً آئی سو لیٹ کردیا۔ موصولہ اطلاع کے مطابق شہر میں گزشتہ رات سے آج دوپہر تک کرونا وائرس کے متأثر مریضوں کے ہونے کی افواہ اڑتی رہی ، جس کی وجہ سے لوگوں نے ایک دوسرے کو فون کرکے آس پاس کی معلومات حاصل کرتے رہے۔ شہر میں ایک میڈیکل اسٹور کے مالک کی رشتے دار سے ٹرک ڈرائیوری کرنے والے ایک نوجوان کے کرونا وائرس سے متأثر ہونے کی اطلاع سوشل میڈیا پر چلتی رہی ، حالانکہ شہر کی ویڈیو کلپنگ بھی ڈالی گئی جس میں ایک پریوار کے کچھ لوگوں کو ایمبولینس میں جاتے ہوئے دکھایا جارہا ہے ، لیکن کسی کے متأثر ہونے کی خبر کی انتظامیہ نے تصدیق نہیں کی ، حالانکہ ویڈیو کو لے کر افراتفری کا ماحول بنا رہا ۔ بتایا جاتا ہے کہ دیر شام ایک نرسنگ ہوم میں ایک شخص بخار کے علاج کے لئے گیا تو ڈاکٹر کو اس کے کرونا وائرس ہونے کا شک ہوا تو اس نے فوراً واپس بھیج کر اپنے نرسنگ ہوم کو آئی سو لیٹ کرایا۔ اُدھر سی ایچ سی انچارج ڈاکٹر اندراج سنگھ نے بتایا کہ سرکاری اسپتال میں کرونا سے متأثر کوئی مریض نہیں آیا ، ضلع اسپتال کی طرف سے بھی دیوبند میں کسی کے کرونا وائرس سے متأثر ہونے کی تصدیق نہیں کی ہے۔ جب کہ شہر میں افواہوں کے سبب لوگ گھرو ں سے باہر نہیں نکلے۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close