دیوبند

تینوں اضلاع کے ڈی ایم ، ایس ایس پی لیں گے کرفیو کا فیصلہ : کمشنر

دیوبند، 25مارچ (رضوان سلمانی) لاک ڈائو ن کی مدت میں اضافہ کئے جانے کے بعد ضلع میں کرفیو نافذ کئے جانے کے خدشات پورے دن گشت کرتے رہے، شوشل میڈیا پر پورے ضلع میں رات سے کرفیو نافذ کرنے کی اطلاعات ریڈیو اور ٹی وی پر آتی رہیں۔ سہارنپور کمشنری کے کمشنر سنجے کمار نے کمشنری کے تینوں اظلاع کے افسرا ن کو اس سلسلہ میں ہدایات دی ، انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کی جانب سے جاری کی جانے والی ہدایات کے مطابق کے مطابق اب صوبائی سطح پر 14اپریل تک لاک ڈائون رہے گا۔ تینوں اضلاع کے ڈی ایم ، ایس ایس پی اور سی ایم اواب حالات کے مدنظر کرفیو نافذکرنے کا مشترکہ طورپر اعلان کرسکتے ہیں ۔ کمشنر سنجے کمار نے موجودہ صورتحال پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ لاک ڈائون کے دوران ضروری اشیاء عوام تک پہنچانے کے لئے انتظامات کئے جارہے ہیں اور اب تمام دوکانیں اور سپلائی کرنے والے سینٹر مقامی انتظامیہ کی ہدایات کے مطابق کھلے گیں۔افسران کے اعلان کے مطابق کل (آج) سے تمام ضروری اشیاء کی فراہمی کے لئے 150ٹیمپو اور 200ٹھیلے صوبائی حکومت کی جانب سے ضلع سہارنپور کو فراہم کئے گئے ہیں۔جن کے ذریعہ سے عوام کو ضروری اشیاء ان کے گھروں پر فراہم کرائی جائے گی۔کسی طرح تحصیل سطح پر مختلف تنظیموں کے تعاون سے ٹیم ورک کی شکل میں کارکنا ن بھی ان امور کو انجام دیں گے۔کمشنر کا کہنا ہے کہ سرکاری میڈیکل خدمات کے ساتھ ساتھ پرائیویٹ طبی خدمات اور دیگر سطحوں سے بھی خدمات حاصل کی جائیں گی۔ریلوے اور بسوں کی خدمات معطل ہونے کی وجہ سے صنعتی یونٹوں میں خدمات انجام دینے والے کارکنان کو ان کے گھروں تک جانے سے روکا جائے اور اگر ان کا گھروں کو جانا نہایت ضروری ہو تو ایسے افراد کو گھر تک جانے انتظامات کئے جائیں۔اسی طرح چیف ڈائولؤمینٹ آفیسر کی جانب سے بھی والینٹئرس کی ایک ٹیم تیارکرکے انہیں گھرگھر ضروری اشیاء پہنچانے کے کام میں لگایا جائے گا، انہوں نے بتایا کہ تمام غریب افراد مزدور ، رکشہ پولر کو بھی اور پٹری سامان بیچنے والے غریب لوگوں کو 20کلو گیہوں اور 15کلو چاول دئے جانے کے انتظامات کئے جائیں۔ میڈیا سے متعلق انہوں نے بتایا کہ اگر میڈیا سے منسلک کوئی بھی فرد کسی غلط معلومات یا خبر کو شائع کرتا ہے تو اس کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائیگی۔ وہیں دوسری جانب انہوں نے یہ بھی کہا کہ مقامی عوامی نمائندوں کے ساتھ بات چیت کرکے عوام کے درمیان ان کے تعاون سے لاک ڈائون کی نفاذ کی پابندی کو لازمی بنایا جائے، انہوں نے کہا کہ جو لوگ ہوم کورن ٹائن میں ہیں ان پر سخت نظر رکھی جائے اور انہیں اس بات کے لئے ٹرین کیا جائے کہ باہر کے لوگوں کے ساتھ ساتھ گھر کے لوگوں سے بھی فاصلہ بناکر رکھا جائے۔ یہ ہدایات بھی دی گئی ہیں کہ صوبہ سے باہر کے افراد اگر کسی مقام پر آتے ہیں تو ان کی آمد ورفت کا ریکارڈ تیار کیا جائے اورا ن سے ملاقات کرنے والوں کی فہرست بھی بنائی جائے ، ایسے موقع پر اگر کوئی شخص کورونا پوزیٹیو پایا جائے تو اس سے ملاقات کرنے والے تمام افراد کو کورین ٹائن کردیا جائے۔یہ سخت ہدایات بھی جاری کی گئی ہیں کہ سڑک پر ایک ساتھ دو سے زیادہ افراد نہ چلیںبلکہ یہ اپیل کی جا ئے جو شخص جہاں ہے وہ وہیں رہے۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close