دیوبند

لاک ڈائون کی وجہ سے دیوبند اور دیہی علاقوں میں نظر آیا زبردست اثر

چوک چوراہوں پر پولیس رہی تعینات، دیوبند کی سرحدیں رہی سیل، خلاف ورزی کرنے والوں پر پولیس نے شکنجہ کسنا شروع کیا

دیوبند، 24مارچ (رضوان سلمانی) کورونا وائرس کے چلتے لاک ڈائون کا دوسرے روز بھی شہر سے دیہات تک زبردست اثر دیکھنے کو ملا، پولیس انتظامیہ کا رویہ بھی سخت رہا، کئی مقامات پر بلاوجہ گھوم رہے لوگوں کے ساتھ پولیس نے سختی برتی تو دوسری طرف تقریباً350لوگوں کے چالان کرکے درجن بھر گاڑیاں سیز کی گئیں پولیس کی سختی کے درمیان چوک چوراہوں اور محلوں میں سنّاٹا نظر آیا، کورونا وائرس کے مرض سے لوگوں کو بچانے کے لئے اعلان کئے گئے لاک ڈائون کا پہلے روز کم ہی اثر نظر آیا تھا اور بازاروں میں بھی دن بھر لوگوں اور گاڑیوں کی آمد ورفت جاری تھی لیکن لاک ڈائون کے دوسرے روز حالات کچھ الگ نظر آئے۔ آج صبح کے وقت جہاں لوگ ضروری گھریلو سامان کی خریداری کرنے بازاروں میں نکلے اور کریانہ ، دودھ، سبزی وغیرہ کی دکانوں پر لوگوں کی بھیڑ نظر آئی حالانکہ گزشتہ کل لوگوں کے ذریعہ کئی روز کے راشن کی خریداری کرنے کی وجہ سے آج دکانوںپر بہت زیادہ بھیڑ نظر نہیں آئی خریداری کرنے کے لئے دی گئی ڈھیل ختم ہونے کے بعد پولیس انتظامیہ الرٹ ہوگیا اوردکان وغیرہ کو بند کراتے ہوئے غیر ضروری طور پر بازاروں میں گھوم رہے لوگوں کو سختی کے ساتھ گھروں کو واپس بھیجا، کئی مقامات پر جمع بھیڑ کو پولیس نے لاٹھیاں پھٹکاکر واپس بھیجا۔ چوک چوراہوں پر پولیس اور پی اے سی کے جوان تعینات رہے، سبھاش چوک، ایم بی ڈی چوک، ریتی چوک سمیت کئی مقامات پر پولیس نے غیر ضروری طور سے اپنی گاڑیوں پر گھوم رہے لوگوں کو روک کر انکے چالان کاٹے انتظامیہ نے 350کے قریب چالان کئے جبکہ ایک درجن گاڑیوں کو سیز کیا گیا، پولیس کی سختی کو دیکھتے ہوئے لوگ گھروں سے نہیں نکلے اور چاروں طرف سنّاٹا پَسرا رہا۔ دیوبند کے سرحدوں کے چاروں طرف پولیس کے سخت پہرا رہا،گائوں کے لوگوں کو شہر تک نہیں آنے دیا گیا ، یوپی، اتراکھنڈ باڈر پولیس چوکی، تلہیڑی بزرگ، گھلولی چیک پوسٹ، رنکھنڈی پولیس چوکی، بھائیلہ پولیس چوکی پر پولیس مستعد رہی اور گاڑیوں کو دیوبند کی سرحد کے اندر داخل نہیں ہونے دیاگیا جبکہ لاک ڈائون کی وجہ سے شہر کے بینک بھی خالی نظر آئے ، ریلوے روڑ پر واقع پنجاب نیشنل بینک ،یونین بینک اور اسٹیٹ بینک سمیت دیگر بینکوں میں گراہک بہت کم پہنچے، حالا نکہ اسٹاف ماسک وغیرہ پہن کر اپنے کاموں میں مشغول رہے، کورونا وائرس کی وجہ سے شہر کے ریلوے روڑ پر واقع ایک ہسپتال کو بند کردیا گیا جس کی وجہ سے مریضوں کو زبردست پریشانی کا سامنا کرناپڑا، ایمرجنسی میں آئے بہت سے مریضو ں کو اسپتال بند دیکھ کر اپنے گھروں کو واپس لوٹنا پڑا۔ دیوبند میں عام دنوں میں مصیبت کا باعث بنے ای رکشائوں کی آمدو رفت لاک ڈائون کے درمیان بھی دیکھی گئی، بازاروں میں کئی مقامات پر ای رکشہ ڈرائیور سواری بھرکر پولیس کی نظر سے بچتے ہوئے سواریوں کو ان کے مقام پر پہنچاتے ہوئے نظر آئے جبکہ پولیس انتظامیہ نے ای رکشہ پر پوری طرح پابندی عائد کرکھی ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close