دیوبند

دیوبندًٖ: پبلک گرلز انٹر کالج میں عالمی یوگا ڈے جوش و خروش سے منایا گیا

انسانی صحت کو برقرار رکھنے کیلئے یوگ انتہائی اہمیت کا حامل : صبا حسیب صدیقی

دیوبند ،21؍جون (رضوان سلمانی) 21؍جون عالمی یوگا ڈے کے موقع پراسکولوں و کالجوں میں کورونا وائرس کی مہلک وبا کی وجہ سے تعلیمی سلسلہ موقوف ہونے اور طلبہ و طالبات کے اداروں میں نہ آنے کے باوجودعالمی یوگا ڈے پورے جوش و خروش کے ساتھ منایا گیا ۔ دیوبند کے مشہور و معروف اور لڑکیوں کی عصری تعلیم کے قدیم ادارہ پبلک گرلز انٹر کالج میں عالمی یوگا ڈے کے موقع پر ٹیچرز و دیگر کارکنان نے یوگ آسن کرکے طالبات و عوام کو صحت و تندرست رہنے کا پیغام دیا ۔ اس موقع پر ادارہ کی پرنسپل صبا حسیب صدیقی اور فزیکل ٹرینرصفیہ گوہرنے مشترکہ طور پر یوگا کی اہمیت اور افادیت بیان کی ۔ صبا حسیب صدیقی نے آن لائن طالبات سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ انسانی زندگی مکمل طور سے قدرت پر منحصر ہے لیکن انسانی صحت کو برقرار رکھنے کیلئے اس ملک کے اطباء ، رشی منی وغیرہ نے جسم کے اعضاء کی حرکات و سکنات کا مطالعہ کیا اور جسم کو توانا اور صحت مند رکھنے کیلئے یوگ آسن وغیرہ دریافت کئے لہٰذا وہ کیفیت جسمیں دماغ جسم کی کسی مخصوص حالت پر مرکوز ہوتا ہے اس کو یوگ آسن کہا جاتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یوگا کی مشق کے لئے ضروری ہے کہ یوگا کے کسی ماھر سے مشورہ کر لیا جائے ۔ صبا حسیب نے بتایا کہ عمر کے اعتبار سے الگ الگ یوگ آسن تجویز کئے جاتے ہیں ۔ پبلک گرلز انٹر کالج کی فزیکل ٹریننگ کی ٹیچر صفیہ گوھر نے یوگا کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے یوگ آسن کرنے کے طریقے اور ان کے اوقات بیان کرتے ہوئے کہا کہ صبح سویرا اٹھ کر بستر پر ہی چند آسن کرنے چاہئیں ۔ بعد ازاں منہ ہاتھ دھونا چاہئے ۔ ایک گلاس پانی پینا چاہئے اگر صبح کو ممکن نہ ہوتو دوپہر یا شام میں بھی یوگ کر سکتے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ یوگ کرنے کے بعد نہانے میں کچھ توقف کرنا چاہئے ۔ یوگ کے لئے ضروری ہے کہ پیٹ خالی ہو ،کھلی ہوا اور روشنی کے مقام پر یوگ کرنا چاہئے ۔ اس کے علاوہ یوگ کرتے وقت ڈھیلے کپڑے پہننے چاہئیں ۔ آسن کرتے وقت باتیں نہ کریں اور ناک سے سانس لیں ۔ صفیہ گوھر نے بتایا کہ چادر ،کمبل یا دری وغیرہ بچھاکر یوگ آسن کرنا چاہئے ۔ خو اتین کو مخصوص ایام اور حمل کے دوران یوگ سے پرہیز رکھنا چاہئے یا ایسے لوگ جو امراض قلب میں مبتلا ہوں اور آپریشن وغیرہ کرا چکے ہوں انہیں معالجین سے مشورہ کے بعد یوگ آسن کرنا چاہئے ۔ انہوں نے بتایا کہ یوگ آسن وغیرہ کرتے وقت دماغ انتہائی پر سکون ہونا چاہئے ۔ صبا حسیب صدیقی نے کہا کہ چہل قدمی کرنے والے افراد کو بھی ہلکا پھلکا یوگ آسن ضرور کرنا چاہئے لیکن اگر یوگ کرتے وقت اگر تھکاوٹ محسوس ہو یا دل کی دھڑکن بڑھنے لگے تو یوگ چھوڑ کر آرام کرنا چاہئے ۔ اس کے علاوہ یوگ آسن کرتے وقت پیٹ یا سینے پر دبائو محسوس ہو تو سانس کو باہر نکال دینا چاہئے اور جب کیفیت معمول پر آجائے تو سانس اندر لینی چاہئے ۔ اس موقع پر انہوں نے طالبات و ٹیچرز کے علاوہ عوام سے اپیل کی کہ اپنی عمر کے مطابق فٹ رہنے اور صحت کو بہتر بنائے رکھنے کے لئے یوگ آسن کو لازمی طور پر اہمیت دینی چاہئے ۔ اس موقع پر جہاں طالبات نے آن لائن رہ کر عالمی یوگا ڈے میں شرکت کی وہیں کالج کا تدریسی عملہ موجود رہا اور انہوں نے یوگ آسن کرکے سب کو بیداری کا پیغام دیا ۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close