دیوبند

دارالعلوم دیوبند کے مفتیان کرام نے نماز عید گھروں میں ادا کرنے کا اعلان کیا

دیوبند ،11؍مئی (رضوان سلمانی) دارالعلوم دیوبند کے کارگذار (Mohtamim) مہتمم نے دارالعلوم کے شعبہ افتاء کے مفتیان کرام کو ایک تحریر بھیج کر معلوم کیا ہے کہ اس وقت ملک میں جاری لاک ڈائون کی وجہ سے جو حالات ہیں اور حکومت کی جانب سے اجتماع پر سخت پابندی عائد کر دی گئی ہے اکثر جگہ مسجدوں میں پانچ افراد سے زائد لوگوں کے اجتماع کی ممانعت ہے اس سے قبل بھی جمع کی نماز کے سلسلہ میں دارالافتاء نے ہدایت جاری کی تھی،

اب جبکہ دو دن کے بعد عید الفطر آنے والی ہے ایسے حالات میں مسلمانوں کے لئے عید الفطر کی نماز ادا کرنے کے سلسلہ میں کیا ہدایات ہیں ،اس کے جواب میں دارالافتاء کے مفتیان کرام نے شرعی جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ جن شرائط و تفصیلات کے ساتھ جمع کی نماز ادا کرنا جائز ہے انہیں شرائط کے ساتھ عید کی نماز بھی ادا کی جائے یعنی امام کے علاوہ کم از کم تین بالغ مرد مقتدی ہوں ،مساجد میں یا دوسری جگہ جیسے ہال یا باہری بیٹھک وغیرہ میں شرائط کی پابندی کے ساتھ عید کی نماز ادا کریں ۔ مفتیان کرام نے کہا ہے کہ جن لوگوں کیلئے عذر و مجبوری کی وجہ سے نماز عید کی کوئی صورت نہ بن سکے ان کیلئے نماز عید معاف ہوگی ،انہیں پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے ،یہ حضرات اپنے اپنے گھروں میں انفراد ی طور پر دو یا چار رکعت نفل چاشت کی نیت سے پڑھ لیں تو بہتر ہے ۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close