دیوبند

حیدرآباد کی طرز پرانائو اور بلند شہر کے وحشی درندوں کو بھی سزا دی جانی چاہئے! پنڈت ستیندر شرما ،حافظ اطہر عثمانی

دیوبند 8؍دسمبر (رضوان سلمانی) شری تری پور ماں بالا سندری دیوی مندر سیوا ٹرسٹ کے چیئرمین پنڈت ستیندر شرما نے کہا ہے کہ جس طریقے پر حیدرآباد کی حیوانیت کرنے والے چاروں ملزمان کا پولیس نے کام تمام کرکے قابل تعریف کام کیا ہے اسی طرح انائو اور بلند شہر کے وحشی درندوں کو بھی سزا دی جانی چاہئے ستندر شرما نے پریس کو جاری اپنے بیان میں کہا کہ حیدرآباد عصمت دری معاملے کے ملزمان کا انکائونٹر کیا جانا پولیس کا قابل تعریف کام ہے کیونکہ بہو بیٹیوں کی زندگی کو ختم کرنے والے انسان نہیں وحشی درندے تھے انہیں جو سزا ملی ہے وہ سہی ہے انہوں نے کہا کہ اس طریقے کے کام کرنے والے مجرم سماج کے لئے داغ ہیں انہوں نے کہا کہ حیدرآباد ،انائو اور بلند شہر کے واقعات نے بھی سماج کو جھنجھوڑ کر رکھ دیا ہے ہمارے ملک میں خواتین کو قدیم زمانے سے ہی عزت دی گئی ہے لیکن خواتین کے تئیں ایسے ذہنیت رکھنے والے انسان کو حکومت کو کڑی سزا دلانے کے لئے قانون بنانا چاہئے تاکہ آگے سے ایسے واقعات کو انجام دینے کی کوشش کرنے والا کئی مرتبہ سوچے انائو اور بلند شہر کے ملزمان کو بھی سخت سزا دی جانی چاہئے ۔مجلس اتحاد ملت کے قومی جنرل سکریٹری حافظ اطہر عثمانی نے کہا کہ حیدر آباد میں زانیوں کو انکائونٹر میں مار گرانے کی تو حمایت کی جاسکتی ہے لیکن جو طریقہ پولیس نے اختیار کیا ہے اس پر موجودہ حکومت اور عدالتوں کو سنجیدگی سے غور کرنا چاہئے کی آج ایسے حالات میں انکائونٹر جیسے معاملات کو عوام صحیح ٹھہرارہی ہے ،انہوں نے کہا کہ ایسے سنگین جرائم پر سرکار کو سخت قوانین بنانے چاہئے تاکہ آنے والے وقت میں کوئی شخص بھی اس طرح کا جرم کرنے کی جرأت نا کرسکے ۔؎

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close