دیوبند

دیوبند، ملک کے آئین نے بلا تفریق تمام ہندوستانیوں کو مساوی حقوق دیئے ہیں: سعد صدیقی

دیوبند، 26؍ نومبر (رضوان سلمانی) یوم آئین کے موقع پراسپرنگ ڈیل پبلک اسکول اور نگر پالیکا دیوبند میں پروگراموں کا انعقاد کیا گیا جس میں آئین سے متعلق حاضرین کو سمجھایا گیا۔ اسپرنگ ڈیل پبلک اسکول میںطلبہ وطالبات نے آئین سے متعلق تقریریں پیش کیں ۔ اس موقع پر اسکول کے چیئرمین سعد صدیقی نے آئین کی اہمیت پر پر روشنی ڈالی اور عام ہندوستانی کو آئین کے ذریعہ دیئے گئے حقوق کی اہمیت کو بیان کیا۔اس موقع پرانہوں نے اپنے خطاب کے دوران طلباء وطالبات کو آئین کی اہمیت سے روشناس کراتے ہوئے آرٹیکل 14؍ کے تحت مساوی حقوق اور اور آرٹیکل 21؍ تحت زندگی کے حقوق کے بارے بتاتے ہوئے کہاکہ آئین ہند نے ہمیں جینے کی مکمل آزادی کے ساتھ ساتھ مساوی حقوق بھی دیئے ہیں، ہندوستان کا آئین اس کی جمہوریت کی بنیادہے جو ہم سب کو برابری کادرجہ دیتاہے۔ انہوں نے طلباء وطالبات کو محنت و لگن کے ساتھ آگے بڑھنے کی نصیحت کرتے ہوئے کہاکہ علم ایسا ہتھیار سے جس سے پوری دنیا کو فتح کیا جاسکتاہے۔

انہوں نے کہاکہ زندگی کے حالات سے گھبرانا نہیں چاہئے بلکہ جستجو اورجدوجہد کے ساتھ آگے بڑھتے رہنا چاہئے اسی کانام زندگی ہے۔ اسکول چیئرمین سعد صدیقی نے کہا کہ جب ہر شہری اپنے ذمہ داری اور حقوق کی دیانتدارانہ طورپر پاسداری کرتاہے اسی وقت ہمارے حقوق بھی محفوظ رہتے ہیں۔انہوں نے ملک کی جمہوریت کے تحفظ اور آئین کی بقاء کے لئے بچوں کو ضروری نصیحتیں کی۔ اسکول کے کو چیئرمین احمد صدیقی نے طلباء وطالبات کوشوق و جذبہ کے ساتھ تعلیم حاصل کرنے کی تلقین کرتے ہوئے کہاکہ جولوگ اپنے اندر منفرد صلاحیتیں پیدا کرتے ہیں انہیں دنیا میں منفرد شناخت حاصل ہوتی ہے۔ انہوں نے آئین ہند کے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ہمیں دستور ہند میں دیئے حقوق کے تئیں سماج کے اندر بیداری پید کرنی چاہئے تاکہ سماج سے تمام برائیوں کاخاتمہ کیاجاسکے اور لوگ اپنے حقوق کے لئے آواز بلند کرسکیں۔ انہوں نے کہاکہ ملک کے آئین نے بلا تفریق تمام ہندوستانیوں کو مساوی حقوق دیئے ہیں ،جس کی ہمیں قدر کرنی چاہئے۔

قبل ازاں طلباء وطالبات نے حب الوطنی پر مبنی پروگرام پیش کئے اورآئین ہند کے متعلق تقریریں بھی کیں۔اس دوران اسکول کی پرنسپل سنیتا نے بچوں کو دستور ہند کے متعلق تفصیل سے سمجھایا۔ اس دوران طلبہ وطالبات کے علاوہ ٹیچرز موجودرہے۔تعلیمی اداروں سمیت مختلف مقامات پر آج یوم آئین منایا گیا ،اس دوران آئین کی تمہید پڑھتے ہوئے آئین کی حلف دلایاگیا اور ملک کی جمہوریت و دستور ہند کی بقاء کا عزم لیاگیا۔آئین کے حوالہ سے منعقد پروگرام میں طلبہ وطالبات نے ملک کی جمہوریت ،آپسی اتحاد،مذہبی آزادی،غیر جانبدار، انصاف ،جمہوریت اور سیکولرزم کے وقار کے تحفظ کا عہد کیا۔ اس دوران گیارہویں جماعت کی طالبہ ضحی خان نے آئین ہند کے حوالہ سے مختصر گفتگو کرتے ہوئے بتایاکہ 26؍ نومبر 1949ء کو ہمارے ملک کا دستور ’آئینی کمیٹی‘ میں پاس ہوا تھا اور 26؍ جنوری 1950ء کو یہ ملک میں نافذ ہوا تھا ۔ اس کے علاوہ گیارہویں اور بارہویں کے طلبہ وطالبات کے لئے ایک وبینار کاانعقاد بھی کیاگیا،جس میں مردو خواتین کے مساوی حقوق،مذہبی آزادی اور حقوق،بچہ مزدوری او رکورونا جیسے عنوانا ت پر گفتگو کی گئی۔ میونسپل بورڈ ہال میں منعقد پروگرام میں چیئرمین ضیا ء الدین انصاری نے بورڈ ممبران اور ملازمین کو دستور ہند کاحلف دلایاگیا۔ اس موقع پر صفائی اور فوڈ انچارج پوپن کمار، محمد اکبر، سدھا گاندھی،مظاہر حسن،ڈاکٹر اسلیم، روما سید،ڈاکٹر واجد،شاہد حسن،شرافت ملک،آصف لیاقت،محبوب عالم،عارف، برلہ سود،رشی پال،محمد طارق،احمد غزالی،پرکاش چند،شاکر،شیکھر پنڈیر،مبین،بلرام، عبداللہ معراج الدین وغیرہ موجودرہے۔ ادھر دون ویلی پبلک اسکول میں دستور ہند کی تمہید پڑھ کر اس کی اہمیت و افادیت پر روشنی ڈالی۔ اس دوران پرنسپل سیما شرما اور چیئرمین راجکشور گپتا نے بچوں کو آئین کے متعلق تفصیل سے بتایا ۔ اس موقع پر جملہ اساتذہ موجودرہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close