دیوبند

دیوبند، فیض الرحمن اور محمد انس سلمانی نے نیٹ امتحان میں کامیابی حاصل کر کے ضلع کا نام روشن کیا

انسٹی ٹیوٹ میں نیٹ کی تیاری کرنے والے 15؍ طلبا نے شاندار کامیابی حاصل کی ہے :شاہد انصاری

دیوبند،18؍اکتوبر (رـضوان سلمانی) علاقے کے معروف اے بی سی انسٹی ٹیوٹ سے نیٹ امتحان کی تیاری کرنے والے ایک درجن سے زاید طلبا نے نیٹ یو جی میں اچھی رینک حاصل کی ہے ۔ حافظ شمش الرحمن کے صاحبزادہ فیض الرحمن کو امتحان میں 650نمبر ملنے پر سرکردہ افراد اور ایچ مقبول میموریل سوسایٹی نے مبارکباد دیتے ہوے ضلع کے سبھی کامیاب طلبا کے شاندار مستقبل کی دعا کی ہے ۔اے بی سی انسٹی ٹیوٹ کی جانب سے جاری پریس ریلیز کے مطابق اس سال انسٹی ٹیوٹ میں نیٹ کی تیاری کرنے والے 15؍ طلبا نے شاندار کامیابی حاصل کی ہے ۔ انسٹی ٹیوٹ کے ڈائریکٹر شاہد انصاری نے بتایا کہ ہمارے انسٹی ٹیوٹ سے تیاری کرنے والوں میں ٹاپر دیویاشی اگروال نے 720؍ میں سے 682؍ نمبر حاصل کیے ہیں ۔ اس کے علاوہ عبدل نے 670؍آلوک نے 661؍ فیض الرحمن نے 650؍آدھیا گوئل نے 648؍منیب عرش انصاری نے 605؍فیصل خان نے 606؍ رحمت خان نے 595؍ نمبر حاصل کیے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ان کے علاوہ آیوشی ، ادیتی اورعمر وغیرہ نے بھی نیٹ امتحان میں اچھا رینک حاصل کیا ہے ۔ ایم بی بی ایس اور بی ڈی ایس وغیرہ کے ہمارے طلبا نے سرکاری میڈیکل کالجوں کی سیٹوں کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے ۔ حافظ شمش الرحمن کے بیٹے فیض الرحمن نے اخباری نمائندوں کو بتایا کہ میں نے اپنی ابتدائی تعلیم بلاسم پبلک اسکول شاہ ولایت سے شروع کی تھی اس کے بعد نیو ایرا اکیڈمی سے میں نے 6 ویں جماعت سے انٹر میڈیٹ تک تعلیم پائی فیض الرحمن نے بتایا کہ انٹر میڈیٹ امتحان میں مجھے 93؍ فیصد سے زیادہ نمبر ملے تھے اور بائیلوجی میں میرے100؍ نمبر آے تھے فیض الرحمن نے بتایا کہ وہ پہلے ایم بی بی ایس اور اس کے بعد ایم ڈی کرنے کا ارادہ رکھتا ہے فیض نے اپنی کامیابی پر اللہ رب العزت کا شکر ادا کرتے ہوے اپنے والدین اور انسٹی ٹیوٹ کے ڈایرکٹر شاہد انصاری اور کمال اختر کی خاص توجہ کی وجہ بتایا فیض الرحمن کو کامیابی پر مبارکباد دینے والوں میں جمیل الرحمن ، عباد الرحمن ،عتیق الرحمن، شجاع الرحمن، عبد اللہ وغیرہ شامل ہیں ۔ ایچ مقبول میموریل سوسایٹی کی جانب سے فیض الرحمن ان کے والدین اور ضلع کے دیگر نیٹ میں کوالیفائی کرنے والے سبھی کامیاب طلبہ و طالبات کے شاندار مستقبل کی دعا کی ہے۔ وہیں دوسری جانب ریلوے روڑ پر سیلون چلانے والے ریاست سلمانی کے ہونہار بیٹے محمد انس سلمانی نے بھی نیٹ کے امتحان میں 99.8فیصد نمبرات حاصل کرکے اپنا، اپنے والدین، اساتذہ اور اسکول کا نام روشن کیا ہے۔ محمد انس کے والد نے بتایا کہ ان کا بیٹا بچپن سے ہی تعلیمی سلسلہ میں بہت زیادہ ہوشیار، شوقین اورذہین ہے۔ انھوں نے بتایا کہ درجہ 12؍کے امتحان میں بھی محمد انس نے 86فیصدر نمبرات حاصل کرکے شاندار کامیابی حاصل کی تھی، جس کے بعد راجستھان کے کوٹہ سے ایک سال کی کوچنگ کرنے کے بعد محمد انس نے نیٹ کے امتحان میں شرکت کی تھی۔ محمد انس سلمانی نے بتایا کہ شروع سے ہی اس کی خواہش ایک بڑا اور کامیاب ڈاکٹر بننے کی ہے۔ اس نے کہا کہ نیٹ کی کامیابی سے ایم بی بی ایس کرنے کی راہ صاف ہوگئی ہے۔ محمد انس کی اس کامیابی پر شہر کے لوگوں نے نیک خواہشات کااظہار کیا ہے۔ محمد انس سلمانی کی کامیابی پر جامعہ دارالعلوم اسعدیہ کے ناظم مفتی احمد خورشید اور جمعیۃ علماء سرساوا بلاک کے جنرل سکریٹری مولانا عثمان خورشید نے خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ محمد انس سلمانی نے نیٹ امتحان پاس کرکے علاقہ کا نام روشن کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ علاقہ کے دوسرے طلباء و طالبات کو بھی ان سے سبق لینا چاہئے اور تعلیم کے تئیں محنت کرکے کامیابی حاصل کرنی چاہئے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close