دیوبند

دیوبند، پہاڑوں کی چوٹیوں کو سرکے فتح حاصل کرنا بڑی کامیابی: عبدالمالک مغیثی

دیوبند،17؍ اکتوبر(رضوان سلمانی) سہارنپور قصبہ بہٹ کے رہنے والے ریحان علی آج منالی کی بلند ترین پہاڑوں کی تین چوٹیاں سر کرنے کے لئے روانہ ہوئے ،ان چوٹیوں کے نام مائونٹ فرینڈشپ (۵۲۵۸ میٹر)مائونٹ لداخی(۴۵۵۳)مائونٹ شتی دھار (۵۲۹۴) ہیں۔ریحان بہٹ کے ایک گائوں مروہ کا باشندہ ہے اور وہ ایک غریب خاندان سے تعلق رکھتے ہیں،۲۳ سال کا یہ نوجوان اس سے پہلے بھی ایشیاں کی عظیم ترین چوٹیوں کو سرنے کا اعزازحاصل کرچکا ہے اور اب دنیا کے بلند ترین پہاڑوں کو فتح کرنے کے عزائم لئے ہوئے ہیں۔آل انڈیا ملی کونسل سہارنپور کے صدر مولانا ڈاکٹر عبدالمالک مغیثی نے تحصیل بہٹ پہنچ کر ریحان علی کو دادوتحسین پیش کی اور اسکے جنون ،جذبہ اور حوصلہ کی سراہنا کی،روانگی کے وقت مولانا ڈاکٹر عبدالمالک مغیثی نے کہا کہ بے شک پہاڑوں کی چوٹیوں کو سر کرنے اور فتح کرنے کا یہ آغاز مشکل ضرور ہوگا لیکن اسکے بعد حاصل ہونے والی منزل انتہائی خوبصورت بھی ہوگی،یہ ہمارے ملک کے لئے خاص طور سے ہمارے علاقہ کے لئے ایک فخر کی بات ہے کہ اترپردیش جیسے صوبہ سے تنہا ریحان علی اس عظیم مہم کے لئے منتخب ہوئے ہیں،مجھے امید ہے کہ وہ اور انکے ساتھ ملک کے دیگر نوجوان بھی پہلے کی طرح ان پہاڑیوں کو بھی کامیابی کے ساتھ فتح کرینگے اور اپنے علاقہ کا نام روشن کرینگے،ریحان علی کو آل انڈیا ملی کونسل کی مکمل حمایت حاصل رہیگی۔ریحان علی کو ان کی مہم پر ایس ڈی ایم بہٹ دپتی یادو،بوبی کرنوال ،مستجاب زیدی،مفتی دلنواز قاسمی ،حافظ عبدالباطن مغیثی ،حافظ رئیس اور نواب ملک وغیرہ نے راوانہ کیا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close