دیوبند

ممبر پارلیمنٹ حاجی فضل الرحمن نے پارلیمنٹ میں یونانی میڈیکل کالجوں کے سلسلہ میں جو مطالبات رکھے ہیں وہ نہایت خوش آئند اور قابل ستائش ہیں: ڈاکٹر انور سعید

دیوبند، 22/ ستمبر (رضوان سلمانی)
ان دنوں جاری پارلیمنٹ سیشن کے دوران سہارنپور پارلیمانی حلقہ کے ممبرپارلیمنٹ حاجی فضل الرحمن کی جانب سے انڈین میڈیسن سینٹر امینڈمنیٹ بل 2020پر بولتے ہوئے ہندوستان میں یونانی اور آیورویدک پیتھی کو فروغ دینے کا مطالبہ پر جامعہ طبیہ دیوبند کے سکریٹری ڈاکٹر انور سعید نے خوشی کااظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انڈین میڈیسن سینٹر کونسل امینڈمینٹ بل کے سلسلہ میں حاجی فضل الرحمن  نے یونانی اورآیورویدک کے فروغ کے ساتھ یونانی میڈیکل کالجوں میں داخلوں کے لئے جو مطالبات کئے ہیں وہ نہایت خوش آئند اور قابل ستائش ہیں۔ ڈاکٹر انورسعید نے بتایا کہ ممبر پارلیمنٹ حاجی فضل الرحمن نے ملک میں یونانی آیورویدک پیتھی کو فروغ دینے کا مطالبہ کے علاوہ مرکزی حکومت کو یہ مشورہ بھی دیا ہے کہ آیورویدک اور یونانی میڈیکل کالجوں میں داخلوں کا طریقہئ کار الگ ہونا چاہئے اوراردو سرٹیفکٹ کی لازمیت کو ختم کرکے ان اداروں میں کورس کے آغاز میں ایک سال تک اردو پڑھائے جانے کا طریقہ رائج کرنا چاہئے۔ انھوں نے کہا کہ اس طریقہئ کارسے خالی سیٹیں رہ جانے کا اندیشہ بھی تقریباً ختم ہوجا ئے گا۔ ڈاکٹر انور سعید نے کہا کہ انھیں امید ہے کہ ایم پی موصوف یونانی اور آیورویدک کے فروغ کے لئے جدوجہد کرتے رہیں گے۔ ڈاکٹر انور سعید نے کہا کہ ایم پی موصوف مسلسل یونانی طب کے فروغ کے لئے جدوجہد کررہے ہیں، جس کی وجہ سے یونانی اورآیورویدک طریقہ تعلیم اور طریقہ علاج کو بڑا فروغ ملے گا۔انھوں نے بتایا کہ حاجی فضل الرحمن نے اپنے مطالبات پیش کرنے کے دوران پارلیمنٹ کو یونانی اور آیورویدک پیتھی کی افادیت واہمیت بتاتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس کی مہلک وبا کے دوران یونانی اورآیورویدک میڈیکل کالجوں نے پورے ملک میں نہایت قابل ستائش کارنامے انجام دیئے ہیں، ان کی ستائش ہونی چاہئے۔ جامعہ طبیہ دیوبند کے ایڈمنسٹریٹر ڈاکٹر اختر سعید نے حاجی فضل الرحمن کی جانب سے پارلیمنٹ میں یونانی اور آیورویدک کو فروغ دیئے جانے کے مطالبہ کو پیش کرنے پر مسرت کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ حاجی فضل الرحمن نے میڈکل کالجوں کے اسٹاف کی تنخواہوں سے متعلق حکومت ہند سے مطالبہ کیا ہے کہ نرسوں، وارڈ بوائے اور پیرامیڈیکل اسٹاف کو جس قدر تنخواہیں شہری علاقوں میں دی جاتی ہیں، دیہی علاقوں میں خدمات انجام دینے والی نرسوں، وارڈ بوائے اورپیرامیڈیکل اسٹاف کو بھی اُسی قدر تنخواہیں دی جائیں۔ انھوں نے امید ظاہر کی کہ حاجی فضل الرحمن کی کوششیں جلد رنگ لائیں گی اور حکومت جلد ان کے مطالبات پورے کرکے یونانی اور آیورویدک کے فروغ کو ایک نئی سمت عطا کریگی۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close